Thursday , October 19 2017
Home / دنیا / ڈھاکہ کیفے حملہ ‘ ایک اور سرغنہ گرفتار کرلیا گیا

ڈھاکہ کیفے حملہ ‘ ایک اور سرغنہ گرفتار کرلیا گیا

ڈھاکہ 14 جنوری ( سیاست ڈاٹ کام ) بنگلہ دیش میں مقبول عام کیفے پر ہوئے انتہائی ہلاکت خیز حملے کے سلسلہ میں ایک اور سرغنہ کو گرفتار کرلیا گیا ہے ۔ ایک ہفتے قبل ہی ایک عسکریت پسند کو جو اس حملہ میں ملزم بنایا گیا تھا انسداد دہشت گردی دستوں نے ایک کارروئی میں ہلاک کردیا تھا ۔ کہا گیا ہے کہ بنگلہ دیش کی پولیس کے انسداد دہشت گردی و بین قومی جرائم کی یونٹ نے داعش سے رابطوں والی تنظیم نیو جماعت المجاہدین کے لیڈر جہانگیر عالم عرف راجب عرف گاندھی کو کل شام ایلنگا کے مقام سے گرفتار کرلیا ہے ۔ اس فورس کے سربراہ منیر الاسلام کا ڈھاکہ ٹریبیون نے یہ کہتے ہوئے حوالہ دیا کہ جہانگیر عالم گلشن ہولے بیکری ( کیفے ) ڈھاکہ پر ہوئے حملے کا اصل ملزم ہے ۔ یہ کیفے ڈھاکہ کے پاش سفارتی علاقہ میں واقع ہے ۔ اس پر حملے میں کم از کم 23 افراد ہلاک ہوگئے تھے جن میں 17 بیرونی شہری بھی شامل تھے ۔ پولیس نے بتایا کہ راجب کا نام اس وقت سامنے آیا جب پولیس کی جانب سے تحقیقات پوری شدت سے کی جا رہی تھیں۔ دوران تحقیقات پولیس کو پتہ چلا تھا کہ راجب در اصل نیو جماعت المجاہدین نامی تنظیم کیلئے کام کر رہا ہے اور وہ شمالی اضلاع کا کمانڈر ہے ۔ واضح رہے کہ ایک ہفتے قبل ایک تخریب کار کو انسدا د دہشت گردی دستوں نے اپنی کارروائی میں ہلاک کردیا تھا ۔ ایک ہفتے قبل نیو جماعت المجاہدین بنگلہ دیش کے انتہائی مطلوب لیڈر نور الاسلام عرف مرزان کو انسداد دہشت گردی پولیس نے اپنی کارروائی میں ہلاک کردیا تھا ۔ یہ کارروائی محمد پور بیری باڑھ علاقہ میں صبح کی اولین ساعتوں میں کی گئی تھی ۔ پولیس کا دعوی تھا کہ مرزان نے اس کیفے پر حملے میں تعاون کیا تھا اور منصوبہ بندی کی تھی ۔ علاوہ ازیں پولیس نے 27 اگسٹ کو نارائن گنج علاقہ میں کارروائی کرتے ہوئے بنگلہ دیشی ۔ کناڈائی شخص تمیم چودھری اور دو دوسروں کو بھی ہلاک کردیا تھا ۔ پولیس کا دعوی ہے کہ تمیم چودھری در اصل نیو جماعت المجاہدین کا سربراہ تھا اور اس نے بنگلہ دیش میں حالیہ دہشت گردانہ سرگرمیوں میں انتہائی اہم رول ادا کیا ہے ۔ گذشتہ ہفتے ڈھاکہ کے مختلف علاقوں سے دس افراد کو بھی گرفتار کیا گیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT