Monday , July 24 2017
Home / ہندوستان / ڈیبٹ کارڈ لین دین کی حوصلہ افزائی

ڈیبٹ کارڈ لین دین کی حوصلہ افزائی

ایم ڈی آر چارجس میں کمی کرنے ریزرو بینک کی تجویز
ممبئی 16 فروری (سیاست ڈاٹ کام) ریزرو بینک آف انڈیا نے مابعد نوٹ بندی ڈیجیٹل لین دین کا چلن برقرار رکھنے کے مقصد سے ڈیبٹ کارڈ ادائیگی پر یکم اپریل سے ایم ڈی آر چارجس میں نمایاں کمی کی تجویز رکھی ہے۔ ایسے چھوٹے تاجرین جن کا سالانہ ٹرن اوور 20 لاکھ روپئے سے کم ہو اور بالخصوص اِس زمرہ میں شامل مختلف شعبوں جیسے انشورنس، میچول فنڈس، تعلیمی ادارے اور سرکاری ہاسپٹلس کے لئے ایم ڈی آر چارجس لین دین کی قدر کا 0.40 فیصد رکھنے کی تجویز ہے۔ ایم ڈی آر دراصل مرچنٹ ڈسکاؤنٹ ریٹ (تاجرین رعایت شرح) ہے جو ڈیبٹ کارڈ لین دین پر عائد کیا جاتا ہے۔ ریزرو بینک نے ایم ڈی آر کو معقولیت پسند بنانے کے لئے مسودہ تیار کیا ہے۔ موجودہ ایم ڈی آر 2 ہزار روپئے تک لین دین کے لئے 0.75 فیصد اور دو ہزار سے زائد کے لئے ایک فیصد ہے۔ آر بی آئی نے کریڈٹ کارڈ ادائیگی پر ایم ڈی آر کے معاملہ میں کوئی پابندی نہیں لگائی ہے۔ نوٹ بندی کے بعد آر بی آئی نے 31 مارچ تک اِن چارجس میں کمی کی ہے۔ نئے چارجس کا اطلاق یکم اپریل سے ہوگا۔ مسودہ میں یہ بھی تجویز رکھی گئی ہے کہ بینکس اِس بات کو یقینی بنائیں کہ تمام تاجرین واضح طور پر یہ سائن بورڈ لگائیں کہ ’’صارفین کو کسی طرح کا سرویس چارج ادا کرنا نہیں ہوگا‘‘۔ مسودہ میں کہا گیا ہے کہ کارڈ کے ذریعہ لین دین میں اضافہ ہوا ہے اور یہ رجحان برقرار رکھنے کی ضرورت ہے۔ پٹرول / ڈیزل کے لئے ڈیبٹ کارڈس کے ذریعہ رقمی ادائیگی پر ایم ڈی آر کے تعلق سے متعلقہ انڈسٹری سے مشاورت کے بعد فیصلہ کیا جائے گا۔ آر بی آئی نے تاجرین کو 4 زمروں میں تقسیم کرنے کی تجویز رکھی ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT