Thursday , August 17 2017
Home / Top Stories / کابل میں جرمن قونصل خانے پر طالبان کا حملہ، 4 ہلاک

کابل میں جرمن قونصل خانے پر طالبان کا حملہ، 4 ہلاک

زائد از 100 افراد زخمی، دھماکو مادّے سے لدی کار قونصل خانے کی دیوار سے ٹکرادی گئی
مزار شریف ۔11 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) طالبان جنگجووں نے دھماکہ خیز مادہ سے بھری ایک کار اس افغان شہر میں جرمن قونصل خانہ کی دیوار سے ٹکرادی جس میں 4 عام شہری ہلاک اور زائد از 10 دیگر افراد زخمی ہوگئے۔ طالبان نے اس کی ذمہ داری لی ہے اور کہا ہے کہ یہ پچھلے ہفتے قندوز کے نزدیک گاؤں پر ہوئے ناٹو کے حملہ کا انتقام ہے جس میں 30 سے زیادہ بے قصور عام شہری جاں بحق ہوگئے تھے ۔عینی شاہدین نے بتایا ہے کہ قونصل خانہ کے آس پاس رک رک گولی چلنے کی آوازیں آرہی ہیں جن سے اس احاطہ کے آس پاس بڑے علاقے میں عمارتوں کی کھڑکیاں ٹوٹ گئی ہیں۔ ناٹو کے ترجمان نے بتایا ہے کہ دھماکہ سے عمارت کو بھاری نقصان ہوا ہے جہاں عموماً 30 افراد کام کرتے ہیں ۔ دھماکہ کے بعد وہاں بندوق برداروں نے گولیاں بھی چلائیں۔ بلخ صوبہ کے ناٹو ترجمان نے سید کمال سادات نے بتایا ہے کہ کئی عام شہری ہلاک ہوچکے ہیں اور اڑتے ہوئے شیشوں سے درجنوں زخمی ہوگئے ہیں مگر قونصل خانہ میں کسی کو کوئی نقصان نہیں پہنچا۔ جرمن وزارت خارجہ کے ترجمان کا کہنا ہے کہ افغان اور جرمن سلامتی دستوں نیز ناٹو خصوصی فورسز نے حملہ کو پسپا کردیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ قونصل خانہ کے تمام جرمن ملازمین محفوظ ہیں ۔ کسی کو زک نہیں پہچا ہے ۔ ابھی یہ نہیں معلوم کہ کتنے افغان شہری ہلاک اور زخمی ہوئے ہیں۔ اس حملہ سے پتہ چلتا ہے کہ وہاں کے حالات حالیہ مہینوں میں کتنے خراب ہوچکے ہیں ۔ شورش زدہ ہلمند سے لے کر قندوز تک لڑائی جاری ہے۔ پچھلے ہفتے امریکی جہازوں نے فضائی حملے کرکے 30 عام شہریوں کو مار ڈالا تھا جس میں بہت سے بچے بھی شامل تھے ۔ کیونکہ طالبان نے افغان اور امریکی فورسز پر حملہ کیا تھا۔ اس کے انتقام میں امریکہ نے عام شہریوں کو نشانہ بنایا تھا۔ حملہ کل رات ہوا تھا افغان فورسز تلاش کی کارروائی کررہی ہیں مگر انہیں اب مزاحمت کا سامنا نہیں ہے۔

TOPPOPULARRECENT