Thursday , August 24 2017
Home / اضلاع کی خبریں / کارپوریٹر مرلی کے قاتلوں کی خودسپردگی

کارپوریٹر مرلی کے قاتلوں کی خودسپردگی

ڈپٹی چیف منسٹر کڈیم سری ہری نے قتل کی سخت مذمت کی

ورنگل /14 جولائی ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) گریٹر ورنگل میونسپل کارپوریشن میں ہنمکنڈہ کے 44 ڈیویژن سے ٹی آر ایس پارٹی سے نمائندگی کرنے والے کارپوریٹر انیشٹی مرلی منوہر 45 سالہ کا تین نوجوانوں نے گھر میں گھس کر قتل کردیا ۔ ڈپٹی سی ایم کڈیم سری ہری نے قتل کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہاکہ ٹی آر ایس پارٹی مرلی کے خاندان کے ساتھ ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ اس قتل کی سخت مذمت کی ہے اور پسماندگان سے اظہار یگنگت کیا ۔ قتل کی وجہ 25 سالہ پرانی مخاصمت بتائی جاتی ہے ۔ 1991 میں کانگریس قائد جناردھن کے قتل کے مقدمہ میں مرلی ملز تھا ۔ جناردھن کے لڑکے بومتی وکرم نے اپنے دو ساتھیوں ارون ، چرنجیوی کے ساتھ ملکر اے مرلی کا قتل کیا ۔ کارپوریٹر کی آج 45 ویں سالگرہ تھی ۔ کمارپلی علاقہ میں اے مرلی کے گھر پر قتل کی واردات پیش آئی ۔ قتل سے قبل قاتلوں مرلی کو فون کرکے بتایا کہ ضروری بات کرنا ہے ۔ مرلی نے کہا کہ گھر پر ہی ہوں آئے بات کریں ۔ ان تینوں نے گھر میں گھستے ہی مرلی کے اوپر مرچی پاوڈر ڈالا اور درانتیوں سے حملہ کرکے قتل کردیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ 1991 میں ہوئے قتل کے بعد جناردھن کا لڑکا وکرم 2007 میں مرلی کو قتل کرنے کا منصوبہ بنایا تھا جس کی اطلاع ملنے پر مرلی نے پولیس میں شکایت درج کروائی تھی ۔ پولیس نے وکرم کی کونسلنگ کرتے ہوئے سخت وارننگ بھی دی ۔ اس کے بعد وکرم کمارپلی علاقہ سے جولائی واڑہ منتقل ہوگیا تھا ۔ 2 ماہ قبل مرحوم جنارھن کی 25 ویں برسی کے موقع پر اس کے لڑکے وکرم نے اپنے ساتھیوں سے والد کے خون کا بدلہ لینے کا اظہار کیا تھا اور کارپوریٹر مرلی کی 14 جولائی کو سالگرہ تھی ۔ سالگرہ سے ایک دن قبل ہی قتل کی واردات پیش آئی ۔ نعش کو ایم بی ایم ہاسپٹل سے گھر تک جلوس کی شکل میں لے جایا گیا ۔ اس موقع پر تمام دوکانات بند رہی ۔ ورنگل کے سیاسی قائدین سابق ڈپٹی چیف منسٹر ٹی راجیا ، ارکان اسمبلی دیاکر راؤ ، سی دھرما ریڈی ، ڈی ونئے بھاسکر ، ٹی ار ایس شعبہ خواتین کی ریاستی صدر گود سدھارانی ، مئیر این نریندر ، ڈپٹی مئیر گریٹر ورنگل خواجہ سراج الدین ، تمام کارپوریٹرس نے آخری دیدار کیا ۔ ڈپٹی سی ایم کڈیم سری ہری نے قتل کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ پولیس اس قتل کی ہر زاویہ سے تحقیقات کر رہے ہے ۔

TOPPOPULARRECENT