Wednesday , August 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / کاغدنگر اردو میڈیم جونئیر کالج کے لکچررس تنخواہوں سے محروم سرپور ٹاون /25 نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) کاغدنگر جونئیر کالج ایک قدیم گورنمنٹ جونئیر کالج ہے اس کالج میں اردو میڈیم اور تلگو میڈیم اور انگلش میڈیم کی سہولت ہیں ۔ لیکن 3 سال قبل گورنمنٹ جونئیر کالج کاغدنگر میں انگلش میڈیم جاماعتوں کو برخواست کردیا گیا ۔ جس کی وجہ سے جونئیر کالج میں سائنس گروپس اردو میڈیم کے طالب علموں کو کافی دشواریاں ہو رہی تھی ۔ یہاں پر اس بات کا ذکر کرنا ضروری ہے کہ سارے تعلقہ کے پانچ منڈلوں میں ایک ہی صرف کاغذنگر میں سرکاری یعنی گورنمنٹ جونئیر کالج اور اردو میڈیم جونئیر کالج وموجود ہے اور تمام تعلقہ کے پانچ منڈلوں کے مسلم اقلیتوں کے لڑکے اور لڑکیاں اردو میڈیم تعلیم حاصل کرنے کیلئے کاغدنگر جونئیر کالج کا رخ کرنے پر مجبور ہو رہے ہیں اور اس کاغدنگر گورنمنٹ جونئیر کالج میں اردو میڈیم طالب علموں کیلئے صرف ایچ ای سی گروپس کی سہولت موجود ہے ۔ اردو میڈیم طالب علموں لڑکے اور لڑکیوں کیلئے اگر سائنس بی پی سی اور ایم پی سی گروپس اردو میڈیم میں تعلیم حاصل کرنے کیلئے کافی دور کا سفر طئے کرنا پڑتا ہے ۔ اس لئے کچھ مقامی لوگوں کی تعاون سے مسلم اقلیتوں کے لڑکے اور لڑکیوں کیلئے بی پی سی اور ایم سی اردو میڈیم گروپس کی سہولت فراہم کرنے کی غرض سے لگ بھگ 3 سال قبل کاغدنگر گورنمنٹ جونئیر کالج میں سیلف فینانس کے ذریعہ یعنی اولیاء طلباء لکچرراس کی اجرت دینے کا وعدہ کیا ۔ بی پی سی اور ایم پی سی اردو میڈیم کا آغاز کر دیا گیا ۔ لیکن دیڑھ سال سے لکچررس کو تنخواہ اور اجرت ادا نہ کرنے پر اردو میڈیم لکچررس نے کالج کو آنا بند کردیا ۔ بی پی سی اور ایم پی سی اردو میڈیم کے طلباء کے احتجاج کرنے پر کالج کو لکچررس دوبارہ آنے شروع کردئے ۔ لیکن گذشتہ 18 مہینوں سے اردو میڈیم کالج لکچررس کی تنخواہ کا مسئلہ جوں کا توں پڑا ہوا ہے ۔ اس سلسلہ میں 22 نومبر کے روز جناب عامر علی خان نیوز ایڈیٹر کے دورہ کاغدنگر کے موقع پر آر اینڈ بی گیسٹ ہاوز میں بی پی سی اور ایم پی سی اردو میڈیم لکچررس عبدالرحیم ، عبدالرزاق ، مدبرالدین اور گرلز لکچررس کماری شائستہ خانم اور کماری تسنین کے اور لکچررس کے وفد نے خصوصی ملاقات کریت ہوئے کاغدنگر سرکاری کالج میں 18 مہینوں سے تنخواہ کی عدم اجرائی اور لکچررس کو عارضی لکچررس CJL، کنٹراکٹ جونئیر لکچررس کا درجہ دلوانے کیلئے نمائندگی کیلئے یادداشت پیش کی اور سرکاری ۔۔۔۔ پر بی پی سی اور ایم پی سی گروپس کو متوازی جماعتوں کیلئے تگرکاری سطحی پر اجازت دلوں کی نمائندگی کی گگی ۔ اس موقع پر جناب امیر علی خان نے بڑی اطمینان کے ساتھ سماعت کیا اور کاغدنگر اردو میڈیم لکچررس کے ساتھ انصاف دلوانے کا تیقن دیا ۔ اس موقع پر شفیح اللہ خان اور ساجد خان بھی موجود تھے ۔

کاغدنگر اردو میڈیم جونئیر کالج کے لکچررس تنخواہوں سے محروم سرپور ٹاون /25 نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) کاغدنگر جونئیر کالج ایک قدیم گورنمنٹ جونئیر کالج ہے اس کالج میں اردو میڈیم اور تلگو میڈیم اور انگلش میڈیم کی سہولت ہیں ۔ لیکن 3 سال قبل گورنمنٹ جونئیر کالج کاغدنگر میں انگلش میڈیم جاماعتوں کو برخواست کردیا گیا ۔ جس کی وجہ سے جونئیر کالج میں سائنس گروپس اردو میڈیم کے طالب علموں کو کافی دشواریاں ہو رہی تھی ۔ یہاں پر اس بات کا ذکر کرنا ضروری ہے کہ سارے تعلقہ کے پانچ منڈلوں میں ایک ہی صرف کاغذنگر میں سرکاری یعنی گورنمنٹ جونئیر کالج اور اردو میڈیم جونئیر کالج وموجود ہے اور تمام تعلقہ کے پانچ منڈلوں کے مسلم اقلیتوں کے لڑکے اور لڑکیاں اردو میڈیم تعلیم حاصل کرنے کیلئے کاغدنگر جونئیر کالج کا رخ کرنے پر مجبور ہو رہے ہیں اور اس کاغدنگر گورنمنٹ جونئیر کالج میں اردو میڈیم طالب علموں کیلئے صرف ایچ ای سی گروپس کی سہولت موجود ہے ۔ اردو میڈیم طالب علموں لڑکے اور لڑکیوں کیلئے اگر سائنس بی پی سی اور ایم پی سی گروپس اردو میڈیم میں تعلیم حاصل کرنے کیلئے کافی دور کا سفر طئے کرنا پڑتا ہے ۔ اس لئے کچھ مقامی لوگوں کی تعاون سے مسلم اقلیتوں کے لڑکے اور لڑکیوں کیلئے بی پی سی اور ایم سی اردو میڈیم گروپس کی سہولت فراہم کرنے کی غرض سے لگ بھگ 3 سال قبل کاغدنگر گورنمنٹ جونئیر کالج میں سیلف فینانس کے ذریعہ یعنی اولیاء طلباء لکچرراس کی اجرت دینے کا وعدہ کیا ۔ بی پی سی اور ایم پی سی اردو میڈیم کا آغاز کر دیا گیا ۔ لیکن دیڑھ سال سے لکچررس کو تنخواہ اور اجرت ادا نہ کرنے پر اردو میڈیم لکچررس نے کالج کو آنا بند کردیا ۔ بی پی سی اور ایم پی سی اردو میڈیم کے طلباء کے احتجاج کرنے پر کالج کو لکچررس دوبارہ آنے شروع کردئے ۔ لیکن گذشتہ 18 مہینوں سے اردو میڈیم کالج لکچررس کی تنخواہ کا مسئلہ جوں کا توں پڑا ہوا ہے ۔ اس سلسلہ میں 22 نومبر کے روز جناب عامر علی خان نیوز ایڈیٹر کے دورہ کاغدنگر کے موقع پر آر اینڈ بی گیسٹ ہاوز میں بی پی سی اور ایم پی سی اردو میڈیم لکچررس عبدالرحیم ، عبدالرزاق ، مدبرالدین اور گرلز لکچررس کماری شائستہ خانم اور کماری تسنین کے اور لکچررس کے وفد نے خصوصی ملاقات کریت ہوئے کاغدنگر سرکاری کالج میں 18 مہینوں سے تنخواہ کی عدم اجرائی اور لکچررس کو عارضی لکچررس CJL، کنٹراکٹ جونئیر لکچررس کا درجہ دلوانے کیلئے نمائندگی کیلئے یادداشت پیش کی اور سرکاری ۔۔۔۔ پر بی پی سی اور ایم پی سی گروپس کو متوازی جماعتوں کیلئے تگرکاری سطحی پر اجازت دلوں کی نمائندگی کی گگی ۔ اس موقع پر جناب امیر علی خان نے بڑی اطمینان کے ساتھ سماعت کیا اور کاغدنگر اردو میڈیم لکچررس کے ساتھ انصاف دلوانے کا تیقن دیا ۔ اس موقع پر شفیح اللہ خان اور ساجد خان بھی موجود تھے ۔

کاغدنگر اردو میڈیم جونئیر کالج کے لکچررس تنخواہوں سے محروم
سرپور ٹاون /25 نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) کاغدنگر جونئیر کالج ایک قدیم گورنمنٹ جونئیر کالج ہے اس کالج میں اردو میڈیم اور تلگو میڈیم اور انگلش میڈیم کی سہولت ہیں ۔ لیکن 3 سال قبل گورنمنٹ جونئیر کالج کاغدنگر میں انگلش میڈیم جاماعتوں کو برخواست کردیا گیا ۔ جس کی وجہ سے جونئیر کالج میں سائنس گروپس اردو میڈیم کے طالب علموں کو کافی دشواریاں ہو رہی تھی ۔ یہاں پر اس بات کا ذکر کرنا ضروری ہے کہ سارے تعلقہ کے پانچ منڈلوں میں ایک ہی صرف کاغذنگر میں سرکاری یعنی گورنمنٹ جونئیر کالج اور اردو میڈیم جونئیر کالج وموجود ہے اور تمام تعلقہ کے پانچ منڈلوں کے مسلم اقلیتوں کے لڑکے اور لڑکیاں اردو میڈیم تعلیم حاصل کرنے کیلئے کاغدنگر جونئیر کالج کا رخ کرنے پر مجبور ہو رہے ہیں اور اس کاغدنگر گورنمنٹ جونئیر کالج میں اردو میڈیم طالب علموں کیلئے صرف ایچ ای سی گروپس کی سہولت موجود ہے ۔ اردو میڈیم طالب علموں لڑکے اور لڑکیوں کیلئے اگر سائنس بی پی سی اور ایم پی سی گروپس اردو میڈیم میں تعلیم حاصل کرنے کیلئے کافی دور کا سفر طئے کرنا پڑتا ہے ۔ اس لئے کچھ مقامی لوگوں کی تعاون سے مسلم اقلیتوں کے لڑکے اور لڑکیوں کیلئے بی پی سی اور ایم سی اردو میڈیم گروپس کی سہولت فراہم کرنے کی غرض سے لگ بھگ 3 سال قبل کاغدنگر گورنمنٹ جونئیر کالج میں سیلف فینانس کے ذریعہ یعنی اولیاء طلباء لکچرراس کی اجرت دینے کا وعدہ کیا ۔ بی پی سی اور ایم پی سی اردو میڈیم کا آغاز کر دیا گیا ۔ لیکن دیڑھ سال سے لکچررس کو تنخواہ اور اجرت ادا نہ کرنے پر اردو میڈیم لکچررس نے کالج کو آنا بند کردیا ۔ بی پی سی اور ایم پی سی اردو میڈیم کے طلباء کے احتجاج کرنے پر کالج کو لکچررس دوبارہ آنے شروع کردئے ۔ لیکن گذشتہ 18 مہینوں سے اردو میڈیم کالج لکچررس کی تنخواہ کا مسئلہ جوں کا توں پڑا ہوا ہے ۔ اس سلسلہ میں 22 نومبر کے روز جناب عامر علی خان نیوز ایڈیٹر کے دورہ کاغدنگر کے موقع پر آر اینڈ بی گیسٹ ہاوز میں بی پی سی اور ایم پی سی اردو میڈیم لکچررس عبدالرحیم ، عبدالرزاق ، مدبرالدین اور گرلز لکچررس کماری شائستہ خانم اور کماری تسنین کے اور لکچررس کے وفد نے خصوصی ملاقات کریت ہوئے کاغدنگر سرکاری کالج میں 18 مہینوں سے تنخواہ کی عدم اجرائی اور لکچررس کو عارضی لکچررس CJL، کنٹراکٹ جونئیر لکچررس کا درجہ دلوانے کیلئے نمائندگی کیلئے یادداشت پیش کی اور سرکاری ۔۔۔۔ پر بی پی سی اور ایم پی سی گروپس کو متوازی جماعتوں کیلئے تگرکاری سطحی پر اجازت دلوں کی نمائندگی کی گگی ۔ اس موقع پر جناب امیر علی خان نے بڑی اطمینان کے ساتھ سماعت کیا اور کاغدنگر اردو میڈیم لکچررس کے ساتھ انصاف دلوانے کا تیقن دیا ۔ اس موقع پر شفیح اللہ خان اور ساجد خان بھی موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT