Saturday , August 19 2017
Home / Top Stories / کالادھن ملک کیلئے تباہ کن ، اس کے خلاف جنگ کرو :مودی

کالادھن ملک کیلئے تباہ کن ، اس کے خلاف جنگ کرو :مودی

نوجوانوں کو ڈیجیٹل لین دین کیلئے رہنمائی کا مشورہ ، ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ نوجوانوں کے میلہ سے خطاب

روہتک (ہریانہ)۔ 12 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) یہ ادعا کرتے ہوئے کہ ملک کو کالے دھن نے ’’تباہ‘‘ کردیا ہے ۔ وزیراعظم نریندر مودی نے آج نوجوانوں سے ربط پیدا کرتے ہوئے ان سے خواہش کی کہ سماجی مسائل کے ساتھ ساتھ اس کے خلاف بھی جنگ کریں ۔ انہوں نے کہا کہ ذات پات ، تعصب ، چھوت چھات اور خواتین کی ہراسانی جیسے سماجی مسائل کے ساتھ ساتھ کالے دھن کے خلاف بھی نوجوانوں کو جنگ کرنا چاہئیے ۔ انہوں  نے سماج کے مختلف شعبوں کیلئے نوجوانوں کی دین کی ستائش کرتے ہوئے نئے انداز فکر پر زور دیا اور کہا کہ نوجوانوں میں بے انتہا توانائی ہوتی ہے ۔ ضرورت اس کو سمجھنے اور اس کے درست استعمال کی ہے ۔ انہیں گمراہ ہونے سے بچنا چاہئیے ۔ وزیراعظم نے نوجوانوں سے خواہش کی کہ وہ 6 سماجی چیالنجوں کا مقابلہ کرنے پر اپنی توجہ مرکوز کریں ۔ ناخواندگی کا خاتمہ ، بے حسی ، کج و انداز فکر ، ذات پات کے بندھنوں سے اوپر اٹھنا ، خواتین سے بدسلوکی اور ماحولیات کے ساتھ بے حسی کا رویہ 6 سماجی چیالنج ہیں ۔ جن کا مقابلہ ضروری ہے ، انہوں نے کہا کہ کالے دھن نے ملک کو تباہ کردیا ہے ۔ حال ہی میں ہم نے کالے دھن کا مقابلہ کرنے کا ایک بڑا فیصلہ کیا ہے ۔ نوجوانوں کو چاہئیے کہ اپنی توانائی اس کے لئے صرف کریں ۔ انہوں نے اعلیٰ مالیتی نوٹوں کی تنسیخ کا حوالہ دیا جس کے تحت 500 اور 1000 روپئے کے کرنسی نوٹوں سے دستبرداری اختیار کی گئی ہے ۔ مودی نے 21 ویں قومی نوجوانوں کے میلہ سے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ خطاب کرتے ہوئے 35 سال سے کم عمر 80 کروڑ افراد کی اہمیت پر زور دیا اور کہا کہ سماجی تبدیلیوں میں ان کا بڑا حصہ ہے ۔

واضح طور پر انہوں نے نوجوانوں سے خواہش کی کہ ذات پات ، تعصب ، کالے دھن ، چھوت چھات کے خلاف جنگ کریں  اور  اجتماعیت ، ربط اور تخلیق کی صلاحیت پر توجہ مرکوز کریں ۔ اجتماعیت کی بات کرتے ہوئے انہوں نے تعصب کے خاتمہ کیلئے اتحاد پر زور دیا اور کہا ہ یہ ایک بڑی طاقت ہے ۔ ربط کے بارے میں انہوں نے کہا کہ ٹکنالوجی میں فاصلے کم کردیئے ہیں ۔ ٹکنالوجی وقت کا تقاضہ ہے ۔ تخلیقی صلاحیت کے بارے میں انہوں نے نئے نظریات ، نئے افکار اور نئے رویوں پر زور دیا ۔ انہوں نے کہا کہ نئے انداز فکر کو ترجیح دی جانی چاہئیے ۔ نئے افکار کیلئے جدوجہد کرنی چاہئیے ۔ دیگر افراد کی باتوں پر توجہ نہیں دینا چاہئیے ۔ مودی نے کہا کہ نوجوان ملک کی طاقت ہیں ۔ کرپشن کے خلاف جنگ سے وہ قائل ہوگئے ہیں کہ یہ بات ممکن ہے کہ مثبت تبدیلی لائی جائے ۔ آج جو کام آپ کررہے ہیں اس کا اثر مستقبل میں پورے ملک میں ظاہر ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کا یہ میلہ ڈیجیٹل انڈیا کیلئے مرکزی اہمیت رکھتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ نوجوان افراد کو ڈیجیٹل تربیت دی جانی چاہئیے تاکہ وہ اس کا استعمال اپنی روز مرہ زندگی میں کرسکیں ۔ انہوں نے نوجوانوں سے خواہش کی کہ ڈیجیٹل لین دین سیکھنے میں دوسروں کی مدد کریں ۔ انہوں نے کہا کہ اپنے اطراف و اکناف کے لوگوں کی رہنمائی کریں تاکہ وہ نقد رقم کے بغیر لین دین کرسکیں ۔ انہوں نے کہا کہ کرپشن اور کالا دھن ملک کی ترقی کو متاثر کرتے ہیں ۔ نوجوانوں کو چاہئیے کہ سوامی وویکانند کی زندگی سے تحریک حاصل کریں ۔

TOPPOPULARRECENT