Tuesday , September 26 2017
Home / Top Stories / کالاد ھن بے نقاب کرنے کیلئے ’’سرجیکل اسٹرائک‘‘

کالاد ھن بے نقاب کرنے کیلئے ’’سرجیکل اسٹرائک‘‘

اب تک ایک لاکھ کروڑ روپئے برآمد ہوئے، وزیراعظم نریندر مودی کا ریمارک
وڈودرا۔/22اکٹوبر، ( سیاست ڈاٹ کام ) سرجیکل اسٹرائیک کا حوالہ دیتے ہوئے وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ اگر حکومت کالا دھن کے سلسلہ میں یہی پالیسی اختیار کرے تو پھر کیا ہوگا۔ انہوں نے حالیہ مہم کا تذکرہ کیا جس کے ذریعہ 65 ہزار کروڑ روپئے کالا دھن بے نقاب کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ کالا دھن رکھنے والوں کے لئے ہم نے کچھ مہلت دی تھی اور یہ جان کر آپ کو خوشی ہوگی کہ 65ہزار کروڑ روپئے کا کالا دھن اب ٹیکس اور جرمانہ کی شکل میں باقاعدہ شکل اختیار کرگیا ہے۔ اب غور کرنے والی بات یہ ہے کہ 36ہزار کروڑ روپئے ( راست منتقلی اسکیم ) کے ذریعہ بچت کی گئی۔ اسی طرح 65ہزار کروڑ روپئے کالا دھن بے نقاب کیا گیا اور مجموعی طور پر یہ رقم ایک لاکھ کروڑ روپئے ہوگئی ہے۔ مودی نے کہا کہ ایک لاکھ کروڑ روپئے کی یہ رقم سرجیکل اسٹرائیک کے بغیر ہی حاصل کی گئی۔ مودی نے ’’ سرجیکل اسٹرائیک ‘‘ کا پاکستانی مقبوضہ کشمیر پر دہشت گردی کے اڈوں کو نشانہ بنانے کیلئے حالیہ فوجی کارروائی کے پس منظر میں حوالہ دیا۔وزیراعظم نریندر مودی نے سابق حکومتوں پر ہوا بازی کا کوئی ویژن نہ رکھنے کا الزام عائد کرتے ہوئے آج کہا کہ ہوا بازی شعبہ کی توسیع و ترقی کے لئے ان کی حکومت ایک مقصد پر مبنی پروگرام پر عمل پیرا ہے ۔ نیز چھوٹے شہروں کے وسائل و صلاحیتوں سے بھرپور استفادہ کیلئے ملک کی پہلی مربوط پالیسی وضع کی گئی ہے ۔ نریندر مودی ودورہ ایرپورٹ کی جدید مربوط عمارت کے افتتاح کے بعد خطاب کررہے تھے ۔ کوچی کے بعد ودودرہ ملک کا دوسرا ماحولیات دوست ’’گرین ایرپورٹ‘‘ بن گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ متوسط طبقات سے تعلق رکھنے والے خاندان ہوائی سفر کو ترجیح دینے لگے ہیں ۔

اس طرح ایرپورٹ کی مصروفیات کے اعتبار سے مستقبل قریب میں ہندوستان دنیا کا تیسرا ملک بن جائے گا ۔ وزیراعظم نے کہا کہ یہ ملک بہت بڑا ہے اور اگر یہ سمجھتے ہیں کہ 80 تا 100 ایرپورٹ کافی ہوجائیں گے تو اس کا مطلب ہوگا کہ ہم ملک کی ترقی میں رکاوٹ ڈالنے کی کوشش کررہے ہیں ۔ بین الاقوامی ایرپورٹ ٹرانسپورٹ اسوسی ایشن کے مطابق 2035 تک مجموعی 442 ملین مسافرین ہیں ۔ ہندوستان 322 ملین نئے مسافر شامل کرے گا ۔
اس ادارہ نے یہ پیش قیاسی بھی کی ہے کہ 2026 تک برطانیہ کو پیچھے چھوڑتے ہوئے عالمی ہوا بازی مارکٹ میں تیسرا بڑا ملک بن جائے گا ۔

TOPPOPULARRECENT