Thursday , June 29 2017
Home / Top Stories / کالے جادو کے علاج کے لئے لڑکی کو گائے کا گوبر کھانے کے لئے مجبور کیاگیا

کالے جادو کے علاج کے لئے لڑکی کو گائے کا گوبر کھانے کے لئے مجبور کیاگیا

ممبئی: پیٹ سے متعلقہ بیماری کے علاج کے طور پر مہارشٹرا کے ضلع لاتور کے پڑوس میں تانترک نے ایک 18سالہ لڑکی کو گائے کا گوبر کھانے کے لئے مجبور کیا۔چونکے دینے والے یہ واقعہ اس وقت سرخیوں میں جب اس کے متعلق ویڈیو ایک میسجنگ ایپ پر وائر ل ہوا۔ضلع لاتور کے چکور پولیس اسٹیشن میں چھ لوگوں کے خلاف جس میں لڑکی کا باپ اور تانتراک بھی شامل ہیں کہ درج کیاگیا ۔

این ڈی ٹی وی سے بات کرتے ہوئے ڈپٹی سپریڈنٹ آف پولیس چکور پولیس اسٹیشن وکاس نائیک نے کہاکہ ایک معمر بھی اس کیس میں ملزم ہے۔پولیس نے آج پربھاکر کیسالا(35)‘گنگادھر شیوالا(65)پنڈت کوری(37)اور ڈاگڈوشیوالہ(40)کوگرفتار کرلیا ہے۔ وہیں پر پولیس نے تانتراک کی تلاش کے لئے ایک ٹیم کرناٹک کے ضلع بیدر بھی روانہ کی ہے۔ ڈی سی پی نائیک نے بتایاکہ لڑکی بی اے سال اول کی طالب علم ہے جو متواتر پیٹ کی بیمار کا شکار ہے۔

گھر والوں نے سونچا کہ لڑکی پر دیوانی کیفیت طاری ہورہی ہے اور فوری طور پر لڑکی کو4جون کے روز ضلع بیدر لے گئے۔اسی گاؤں کی ایک عورت جس کو مارگی کا مرض لاحق تھا وہ بھی ساتھ تھی ۔ جب دونوں وہاں پر پہنچے تو انہیں علاج کے طور پر بے تحاشہ پیٹ کر گوبر کھانے کے لئے مجبور کیاگیا۔ملزمین میں سے کسی ایک جانب سے تیار کیاگیا ویڈیو جب پولیس کے مشاہدے میں آیا تب پولیس حرکت میں ائی۔

لاتور پولیس نے کالے جادو‘ اگھوری عمل اور اس کے متعلق دیگر دفعات کے تحت ایک مقدمہ درج کرلیاہے

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT