Saturday , September 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / کانگریس بھوک ہڑتال کیمپ برخاست ، قائدین گرفتار

کانگریس بھوک ہڑتال کیمپ برخاست ، قائدین گرفتار

رات دیر گئے پولیس نے اچانک کیمپ پر ہلہ بول دیا
کریم نگر۔ 25 اگست (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) کانگریس پارٹی قائدین کے احتجاجی بھوک ہڑتال کیمپ پر پولیس نے اچانک دھاوا کرتے ہوئے یہاں موجود کانگریس قائدین کو گرفتار کرلیا۔ کانگریس قائدین ٹوٹہ پلی پراجیکٹ کی منسوخی کے خلاف احتجاج کررہے تھے اور وہ اس ریزروائر کو 500 کروڑ روپئے کی منظوری کا مطالبہ کررہے تھے۔ سابق کانگریس رکن پارلیمنٹ پونم پربھاکر، ضلع کانگریس کمیٹی کے صدر کنکم مرتنجیم سابق رکن اسمبلی بومیا وینکٹیشور سابق ایم پی وینکنا، ضلع صدر مہیلا کانگریس جے سری، کرار راج شیکھر ،گجالا روی، او پوری روی، بی راہول و دیگر کو پولیس نے گرفتار کرلیا۔ کانگریس قائدین بھوک ہڑتالی کیمپ میں کے سی آر کے خلاف نعرے بازی کرتے ہوئے انتخابات سے قبل کے سی آر کے عوام سے کئے گئے وعدوں پر عمل آوری کا مطالبہ کررہے تھے۔ توٹہ پلی اوگلا پورم ریزروائر کی منسوخی کے بعد ضلع کانگریس قائدین نے یہاں احتجاج کا آغاز کیا۔ پیر کو چکور مانٹری منڈل ملکنور کو چیف منسٹر کی آمد اطلاعات کے بعد توٹہ پلی ریزروائر پوراٹا سمیتی کے زیراہتمام اتوار کی شب سے سمیتی کنوینر کڈم لنگا مورتی کی زیرقیادت مختلف منڈلس کے کانگریس قائدین کارکن چگورماڑی بس اسٹانڈ کے قریب جمع ہوئے اور اجلاس منعقد کیا۔ اس اجلاس سے سابق ایم پی کریم نگر پونم پربھاکر نے خطاب کرتے ہوئے چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر سے اس بات کا مطالبہ کیا کہ توٹہ پلی پراجیکٹ کیلئے 500 کروڑ روپئے منظور کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر نے گنڈی پلی گوراویلی توٹہ پلی پراجیکٹ کی تکمیل کیلئے اگر ضرورت محسوس ہوتو وہ اپنی خدمات پیش کرنے تیار ہیں اور یہاں کرسی ڈال کر بیٹھ کر کاموں کو پورا کراؤں گا، ایسا کہا تھا تاہم کے سی آر اپنے وعدے بھول گئے جبکہ کانگریس نے کے سی آر کو یہاں بیٹھنے کیلئے کرسی دی ہے۔ صدر ڈی سی سی کے مرتنجیم نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس علاقہ کے کسانوں کی ترقی کے لئے آنجہانی چیف منسٹر راج شیکھر ریڈی نے پراجیکٹ کو منظوری دی تھی۔ انہوں نے توٹہ پلی پراجیکٹ کیلئے پانچ سو کروڑ روپئے منظور کرنے کا حکومت سے مطالبہ کیا۔ اس وقت تک ہم یہاں سے ہٹنے والے نہیں ہیں۔ پولیس نے یہاں ہڑتالی کیمپ کو برخاست کردینے کی خواہش کی اور پھر رات دیر گئے اچانک کیمپ پر ہلہ بول کر کانگریس قائدین کو گرفتار کرلیا گیا۔ اس طرح احتجاجی کیمپ کو برخاست کردیا گیا۔

TOPPOPULARRECENT