Sunday , September 24 2017
Home / سیاسیات / کانگریس رکن نے اسپیکر کی میز پر پلے کارڈ پھینک دیا

کانگریس رکن نے اسپیکر کی میز پر پلے کارڈ پھینک دیا

برہم اسپیکر سمترا مہاجن نے ادھیررنجن چودھری کی حرکت پر ایوان کا اجلاس ملتوی کردیا
نئی دہلی۔27جولائی( سیاست ڈاٹ کام ) ایک احتجاجی کانگریس رکن نے لوک سبھا میں آج اپنا پلے کارڈ اسپیکر کی میز پر پھینک دیا ۔ اس پر برہم اسپیکر سمترامہاجن نے ایوان کا اجلاس ایک گھنٹہ کیلئے ملتوی کردیا ۔ ادھیر رنجن چودھری نے اپنا پلے کارڈ اُس وقت اسپیکر کی میز پر پھینکا جب کہ دہلی ہائیکورٹ ( ترمیمی ) بل 2015ء پر مباحث جاری تھے ‘ احتجاجی کانگریس ارکان وزیر خارجہ سشما سوراج ‘ چیف منسٹر راجستھان وسندھرا راجے اور چیف منسٹر مدھیہ پردیش شیوراج سنگھ چوہان کے استعفیٰ کا مطالبہ کرتے ہوئے نعرہ بازی کررہے تھے ۔ وزیر قانون ڈی وی سدانند گوڑا نے غور کیلئے بل پیش کیا ۔ بی جے پی رکن میناکشی لیکی نے اس پر تقریر کی ۔ جب کہ کانگریس ارکان حکومت کے خلاف نعرہ بازی جاری رکھے ہوئے تھے ۔ اسی دوران چودھری اسپیکر کی میز کے قریب ایک اسٹانڈ پر کھڑے ہوگئے اور انہوں نے میز پر پلے کارڈ پھینک دیا ۔ وہ کچھ کہہ رہے تھے لیکن شوروغل کے درمیان کچھ بھی سنائی نہیں دیا اس پر برہم اسپیکر نے اجلاس ایک گھنٹے کیلئے ملتوی کردیا ۔ دوبارہ اجلاس کا آغاز ہونے پر بی جے پی ارکان چودھری کے رویہ کے خلاف احتجاج کرتے دیکھے گئے ۔ 30سے زیادہ ارکان بشمول کانگریس ‘ بایاں بازو اور ٹی آر ایس ایوان کے وسط میں چیخ رہے تھے اور پلے کارڈ اٹھائے ہوئے تھے ۔ نائب صدر کانگریس راہول گاندھی کو شہ نشین پر کھڑے ہوتے اور ٹہلتے ہوئے دیکھا گیا ۔ انہیں صدر کانگریس سونیا گاندھی سے بات چیت میں مصروف بھی دیکھا گیا ‘ جب کہ ان کی پارٹی کے ارکان ایوان کے وسط میں جمع ہوکر نعرہ بازی کررہے تھے ۔ ’’ ہمیں انصاف چاہیئے ‘‘ اور پلے کارڈس پھینک رہے تھے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT