Friday , August 18 2017
Home / سیاسیات / کانگریس کی گھٹی میں عدم تحمل شامل

کانگریس کی گھٹی میں عدم تحمل شامل

صدر جمہوریہ سے شکایت پر مرکزی وزیر وینکیا نائیڈو کا ردعمل
نئی دہلی۔/3نومبر، ( سیاست ڈاٹ کام ) بڑھتے ہوئے عدم تحمل کے خلاف کانگریس کے راشٹرپتی بھون تک مارچ پر حکومت اور بی جے پی نے آج شدید اعتراض کرتے ہوئے کہا کہ سیاسی طور پر بے آسرا لوگ ہی جمہوری فیصلہ کو چیلنج کررہے ہیں اور اپنے وجود کا احساس دلانے کیلئے اس طرح کی ڈرامائی اداکاری کررہے ہیں۔ یہ الزام عائد کرتے ہوئے کہ سیاسی عدم تحمل کانگریس کی گھٹی میں شامل ہے۔ مرکزی وزیر اور بی جے پی کے سینئر لیڈر مسٹر ایم وینکیا نائیڈو نے کہا کہ وہ غلط پتہ ( مقام ) پر گئے ہیں جبکہ انہیں راج بھونوں کو جانا چاہیئے تھا کیونکہ کانگریس اور اس کی حلیف جماعتوں کی زیر اقتدار ریاستوں میں ناخوشگوار واقعات پیش آئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عدم تحمل کی باتیں کانگریس کیلئے زیب نہیں دیتیں کیونکہ کشمیری پنڈتوں کا قتل عام اس کے دور حکومت میں ہوا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ہمارے اخلاقی اقدار کو مسخ کرنے کی منظم کوشش کی جارہی ہے جو کہ وقت کی کسوٹی پر کھری اُتری ہیں اور جاریہ رسوا کن مہم کا مقصد ترقی کی راہ میں رکاوٹ پیدا کرنا ہے۔ وہ نہیں چاہتے کہ مودی حکومت کامیاب ہوجائے اور یہ کیسے کہا جاسکتا ہے کہ عدم رواداری میں اچانک اضافہ ہوگیا ہے جوکہ بعید از حقیقت ہے۔ کانگریس کی جانب سے عدم تحمل کا مسئلہ صدر جمہوریہ سے رجوع کرنے پر مسٹر نائیڈو نے کہا کہ جس پارٹی نے ایمرجنسی نافذ کی تھی کس طرح عدم تحمل کی بات کرسکتی ہے ان پر عوام ہنس رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT