Wednesday , September 20 2017
Home / Top Stories / کانگریس کے ’’چلو ملنا ساگر‘‘ پروگرام کو پولیس نے ناکام بنادیا

کانگریس کے ’’چلو ملنا ساگر‘‘ پروگرام کو پولیس نے ناکام بنادیا

ضلع میدک کے تمام سرحدوں کی ناکہ بندی ، متعدد قائدین گرفتار ، گاندھی بھون کے پاس کشیدگی کا ماحول
حیدرآباد ۔ /26 جولائی (سیاست نیوز) کانگریس قائدین اور پولیس میں ٹکراؤ سے گاندھی بھون کے علاقے میں کشیدگی پیدا ہوگئی اور کافی دیر تک ٹریفک جام ہوگئی ۔ پولیس نے کانگریس کے چلو ملنا ساگر پروگرام کو ناکام بناتے ہوئے کانگریس قائدین کو گرفتار کرلیا اور انہیں گوشہ محل ، نارائن گوڑہ کے علاوہ شہر کے دوسرے پولیس اسٹیشن منتقل کردیا ۔ ضلع میدک کی تمام سرحدوں کی ناکہ بندی کرتے ہوئے تلنگانہ کے مختلف اضلاع سے ضلع میدک پہونچنے کی کوشش کرنے والے قائدین کو ریاست کے مختلف مقامات پر گرفتار کرلیا گیا ۔ ملنا ساگر متاثرین  کی تائید میں کل ضلع میدک بند منظم کرنے والی اصل اپوزیشن کانگریس نے آج ملنا ساگر کے متاثرین اور لاٹھی چارج سے زخمی ہونے والے کسانوں سے ملاقات کرنے کیلئے چلو ملنا ساگر پروگرام منظم کیا جس کو پولیس نے کانگریس قائدین کو گرفتار کرتے ہوئے ناکام بنادیا ۔ پروگرام کے مطابق کانگریس کے اہم قائدین مسٹر ایس جئے پال ریڈی ، مسٹر کے جانا ریڈی ، مسٹر محمد علی شیبر ، مسٹر ملوہٹی وکرامارک ، مسٹر مدھو گوڑ یشکی ، مسٹر جگاریڈی ، مسٹر بلرام نائیک کے علاوہ دوسرے قائدین گاندھی بھون سے بذریعہ بس ملنا ساگر روانہ ہونے کیلئے باہر نکلتے ہی پولیس نے انہیں روک لیا ۔ ضلع میدک میں 144 سیکشن نافذ ہونے سے واقف کراتے ہوئے انہیں جانے کی اجازت نہیں دی جس پر کانگریس قائدین اور پولیس کے درمیان لفظی جھڑپ ہوگئی اور حالت کشیدہ ہوگئے ۔ کانگریس قائدین ملنا ساگر جانے کی ضد پر اڑے رہے ۔ بحث و تکرار سے دور دور تک ٹریفک جام ہوگئی تھی ۔ کانگریس قائدین و کارکن مخالف حکومت نعرے لگارہے تھے ۔ (سلسلہ صفحہ 8 پر)

TOPPOPULARRECENT