Friday , April 28 2017
Home / Top Stories / کانگریس ۔ سماج وادی اتحاد ’’ٹھگ بندھن‘‘ : راجناتھ

کانگریس ۔ سماج وادی اتحاد ’’ٹھگ بندھن‘‘ : راجناتھ

حریفوں کا قصاب سے تقابل، بی جے پی کی ذہنیت کا عکاس : کانگریس

سنت کبیرنگر (یوپی) ۔ 22 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ نے دھنگھٹا میں ایک انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سماج وادی پارٹی اور کانگریس کا اتحاد ’’ٹھگ بندھن‘‘ ہے۔ انہوں نے کہا کہ کئی کرپٹ قائدین دونوں پارٹیوں میں موجود ہیں۔ ایک ماہ قبل دونوں پارٹیوں نے یوپی کے اسمبلی انتخابات کیلئے اتحاد کرلیا ہے لیکن بی جے پی کی تائید میں لہر چل رہی ہے اور آئندہ حکومت یوپی میں بی جے پی ہی تشکیل دے گی۔ اگر وہ برسراقتدار آجائے تو کاشتکاروں کو ایک سال کیلئے صفر فیصد شرح سود پر قرضے دے گی۔ نئی دہلی سے موصولہ اطلاع کے بموجب کانگریس کے ترجمان ابھیشیک سنگھوی نے ایک پریس کانفرنس کے دوران بی جے پی کے قومی صدر امیت شاہ کے ’’قصاب‘‘ تبصرہ کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ اس سے پارٹی کی فرقہ وارانہ ذہنیت کی عکاسی ہوتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جس انداز میں امیت شاہ نے اپنے حریفوں کانگریس اور سماج وادی پارٹی کا تقابل 26 نومبرکے دہشت گرد حملہ آوروں کے ساتھ کیا ہے اور کہا ہیکہ جب تک یوپی ’’قصابوں‘‘ کانگریس، سماج وادی پارٹی اور بہوجن سماج پارٹی سے چھٹکارا حاصل نہ کرلے، اس کی ترقی ناممکن ہے۔ انہوں نے پورے اپوزیشن کا تقابل دہشت گرد حملہ آوروں کے ساتھ کرتے ہوئے انہیں قصاب قرار دیا ہے۔ کانگریس قائدین نے کہا کہ بی جے پی قائد کا یہ بیان ان کی فرقہ وارانہ ذہنیت کا عکاس ہے اور اس کی شدت سے مذمت کی جانی چاہئے۔ ہر شخص تسلیم کرتا ہیکہ قصاب ایک مجرم تھا۔ اس کا تقابل کانگریس، ایس پی اور بی ایس پی سے کرنا بی جے پی کی فرقہ وارانہ ذہنیت کا عکاس ہے۔ بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ یوگی آدتیہ ناتھ نے قبرستان کا مسئلہ اٹھایا تھا۔ سنگھوی نے کہا کہ یہ ماحول کو فرقہ وارانہ رنگ دے کر رائے دہندوں کو فرقہ وارانہ خطوط پر رائے دہی کی ترغیب دینے کے مماثل اور انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی ہے۔

سربراہ فوج کا جنوبی کمان کا دورہ
پونے ۔ 22 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) سربراہ فوج جنرل بپن راو ت نے آج جنوبی کمان کے ہیڈکوارٹرس کا دورہ کیا جہاں پر انہیں کارروائی کیلئے تیاری اور دیگر انتظامی پہلوؤں کی تفصیلات سے اہم دفاعی شعبوں میں واقف کروایا۔ یہ جنوبی کمان کے ہیڈکوارٹرس کا جنرل راوت کا اولین دورہ تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT