Wednesday , May 24 2017
Home / Top Stories / ’کجریوال فیس ادا نہیں کرسکتے تو میں مفت پیروی کرسکتا ہوں‘

’کجریوال فیس ادا نہیں کرسکتے تو میں مفت پیروی کرسکتا ہوں‘

ارون جیٹلی کے مقابلے دہلی کے چیف منسٹر بہتر، رام جیٹھ ملانی کا ا دعا

نئی دہلی ۔ 4 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) سرکردہ وکیل رام جیٹھ ملانی نے آج کہا ہیکہ دہلی کے چیف منسٹر اروند کجریوال اگر وزیرفینانس ارون جیٹلی کی طرف سے دائر کردہ ہتک عزت کے مقدمہ کی پیروی کرنے والے وکیل کی فیس ادا کرنے کی استطاعت نہیں رکھتے تو وہ (جیٹھ ملانی) کسی فیس کے بغیر ان کے مقدمہ کی پیروی کرنے کیلئے تیار ہیں۔ جیٹھ ملانی نے جیٹلی پر تنقید کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ وکیل کی فیس ادا کرنے حکومت دہلی کے اقدام پر پیدا شدہ تنازعہ دراصل ان (جیٹلی) کی طرف سے ہی اکسایا گیا ہے۔ اس دوران عام آدمی پارٹی (عآپ) نے الزام عائد کیا ہیکہ ایک خانگی کمپنی نے جب وہ 2G اسکام میں پھنس گئی تھی اپنے مقدمہ کی پیروی کیلئے جیٹلی کو بھاری رقم بطور فیس ادا کی تھی۔ عآپ نے چیف منسٹر کجریوال کے خلاف مقدمہ کی پیروی کرنے والے وکیل جیٹھ ملانی کو سرکاری خزانہ سے فیس ادا کرنے حکومت دہلی کے اقدام کی بھرپور حمایت کی اور کہا کہ عآپ کے پاس ایک پیسہ بھینہیں ہے اور کجریوال مہنگے وکلاء کی خدمات حاصل کرنے کے متحمل نہیںہیں۔ رام جیٹھ ملانی نے کہاکہ یہ حکومت کی ذمہ داری ہیکہ وہ اپنے چیف منسٹر کی دفاع کرے۔ نامور وکیل نے کہا کہ ’’یقیناً میں ان (کجریوال) کی پیروی کروں گا۔ حتیٰ کہ وہ مجھے فیس ادا نہ بھی کریں لیکن انہوں نے کہا کہ نہیں، میں فیس ادا کرنا چاہتا ہوں۔ چنانچہ میں نے اپنے بلز روانہ کیا تھا۔ حتیٰ کہ اگر حکومت (دہلی) بھی ان کی مدد نہیں کرے گی تو میں کروں گا‘‘۔ وکیل کی فیس ادا کرنے کے مسئلہ پر کجریوال کے خلاف پیدا کردہ مسائل پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے جیٹھ ملانی نے کہا کہ ’’اگر ضروری ہو تو میں ان (کجریوال) کی روزمرہ کی زندگی چلانے کیلئے درکار مصارف کی ادائیگی میں بھی مدد کرسکتا ہوں کیونکہ ارون جیٹلی کے مقابلے کجریوال صاف ستھرے اور دیانتدار شخص ہیں‘‘۔ دہلی کے ڈپٹی چیف منسٹر منیش سیسوڈیا نے محکمہ نظم و نسق عامہ (جی اے ڈی) کو  جیٹھ ملانی کے بلز ادا کرنے کی ہدایت کی تھی لیکن باور کیا جاتا ہیکہ لیفٹننٹ گورنر انیل بائجال نے سالیسیٹر جنرل رنجیت کمار سے اس ضمن میں رائے طلب کیا ہے۔ جیٹھ ملانی کی قانونی فیس اور مقدمہ کے دیگر مصارف کے بلز 3.4 کروڑ روپئے پر مشتمل ہیں۔ جیٹھ ملانی نے مزید کہا کہ ’’اگر وہ (کجریوال) (فیس) ادا کرنے کے متحمل نہیں ہیں تو میں مفت پیروی کروں گا۔ میں اپنے 90 فیصد موکلین کو مفت خدمات فراہم کیا کرتا ہوں‘‘۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT