Sunday , September 24 2017
Home / سیاسیات / کجریوال کی سردمہری سے مہاراشٹرا عاپ کارکن مایوس

کجریوال کی سردمہری سے مہاراشٹرا عاپ کارکن مایوس

ممبئی کا دورہ کرنے کے دوران مقامی پارٹی قائدین سے عدم ملاقات
ممبئی 21 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) ریاست مہاراشٹرا کے عام آدمی پارٹی کے قائدین نے چیف منسٹر دہلی اور پارٹی سربراہ اروند کجریوال کی سرد مہری پر مایوسی کا اظہار کیا ہے۔ کل شہر ممبئی کے ان کے دورہ کے دوران انھوں نے پارٹی کے کسی بھی لیڈر سے ملاقات نہیں کی اور نہ کجریوال یہاں 2014 ء لوک سبھا انتخابات کے دوران اجازت حاصل کئے بغیر مبینہ طور پر ریالی اور جلسہ منعقد کرنے کے ایک کیس کے سلسلہ میں مقامی عدالت میں حاضر ہوئے تھے۔ عدالت میں کیس کی سماعت کے فوری بعد وہ چلے گئے۔ عام آدمی پارٹی کے مقامی قائدین نے کہاکہ پارٹی کے سربراہ کو مہاراشٹرا میں پارٹی کی توسیع میں دلچسپی نہیں ہے اور نہ ہی ان کا کوئی ویژن دکھائی دیتا ہے۔ پارٹی سے معطل شدہ لیڈر اور مہاراشٹرا میں عام آدمی پارٹی کے سابق اہم لیڈر مانک گاندھی نے کجریوال پر الزام عائد کیاکہ وہ ریاست مہاراشٹرا میں پارٹی کی بنیاد کو مسمار کررہے ہیں۔ کجریوال صرف اپنی دہلی کی ٹیم کو سرگرم رکھنا چاہتے ہیں جبکہ انھیں دیگر ریاستوں کے اپنی پارٹی کے قائدین کو درپیش چیالنجس سے کوئی سروکار نہیں ہے۔ اس لئے وہ دانستہ طور پر مہاراشٹرا میں پارٹی کی بنیاد کو تباہ کررہے ہیں۔ کجریوال کے دورہ کے دوران کرلا کورٹ کے باہر صرف مٹھی بھر لوگ پریتی شرما، مینن، میرا سانیال کے ساتھ دہلی کے کارکن موجود تھے۔ یہ پہلا موقع ہے کہ پارٹی سربراہ کے دورہ کے موقع پر اُن کے پیچھے حامیوں کا مضبوط گروہ نہیں تھا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT