Sunday , August 20 2017
Home / ہندوستان / کجریوال کی شراب پالیسی پر پرشانت بھوشن کی تنقید

کجریوال کی شراب پالیسی پر پرشانت بھوشن کی تنقید

نوائیڈا ۔ 21اگست( سیاست ڈاٹ کام ) چیف منسٹر اروند کجریوال پر تازہ تنقید کرتے ہوئے عام آدمی پارٹی کے سابق لیڈر پرشانت بھوشن نے کہا کہ اروندکجریوال نے جو شراب پالیسی بنائی ہے وہ عوام دشمن ہے ۔ انہوں نے کجریوال سے سوال کیا کہ آیا پنجاب کے انتخابات ہونے کے بعد وہ ایک سال کے اندر شراب کے ہراج کی پالیسی کو بحال کریں گے ۔ شراب قانون کی کشادگی کا سوال اٹھاتے ہوئے انہوں نے مطالبہ کیا کہ حکومت کو فوری اس طرح کی دکانات بند کرانے چاہیئے جو مقامی افراد کی منظوری کے بغیر قائم کئے جارہے ہیں ۔ سوارج ابھیان  کے بانی پرشانت بھون نے کہاکہ محلہ سبھاؤں کی ایسی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہے کہ وہ شراب خانے بندکرانے کی ہدایت دے سکیں ۔ اروند کجریوال اپنی پالیسیوں کے ذریعہ عوام کو گمراہ کررہے ہیں اور اس طرح کی مخالفت عوام پالیس ہرگز قبول نہیں کی جائے گی ۔ قبل ازیں سوارج ابھیان کے بانی نے الزام عائد کیا کہ دہلی میں 58شراب کی دکانیں کھل گئی ہیں جب سے عام آدمی پارٹی نے اقتدارسنبھالا ہے شراب عام ہوگئی ہے اور محلہ سبھاؤں کو اختیار دیا گیا ہے کہ اگر شراب خانوں کی وجہ سے گڑبڑ ہونے کی شکایت ملتیہے تو وہ اس شراب خاتون کو بند کراسکتے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT