Monday , August 21 2017
Home / دنیا / کرائسٹ چرچ میں ہلاکت انگیز زلزلہ کی پانچویں برسی

کرائسٹ چرچ میں ہلاکت انگیز زلزلہ کی پانچویں برسی

کرائسٹ چرچ (نیوزی لینڈ) ۔ 22 فبروری (سید مجیب کی رپورٹ) نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں آج پانچ سال قبل آئے ہلاکت انگیز زلزلہ کی برسی منائی گئی جس میں 185 افراد ہلاک ہوگئے تھے جبکہ عوام میں آج بھی حکام کے خلاف غم و غصہ پایا جاتا ہے کیونکہ اب تک مہلوکین کے ورثاء کو انشورنس کے تحت ملنے اولی رقومات کی ادائیگی میں تاخیر ہورہی ہے اور کسی سے کوئی محاسبہ ممکن نہیں۔ 2011ء میں آئے 6.3 شدت والے زلزلہ کو ملک کی بدترین آفت سماوی سے تعبیر کیا جاتا ہے۔ آج اس اندوہناک واقعہ کی پانچویں برسی کے موقع پر مہلوکین کو خراج عقیدت پیش کرنے کیلئے سارا شہر رات 12.51 (مقامی وقت) بجے ایک منٹ کیلئے تھم گیا کیونکہ یہی وہ وقت تھا جب پانچ سال قبل کرائسٹ چرچ میں تباہیاں ہوئی تھیں۔ اس موقع پر وزیراعظم جان کی نے کہا کہ آج ہم سب یہاں اس اندوہناک زلزلہ کی برسی کے موقع پر اپنے مہلوک عزیزوں اور رشتہ داروں کو خراج عقیدت پیش کرنے یہاں جمع ہوئے ہیں جنہوں نے اپنی زندگیاں گنوادیں ان کیلئے دعا اور ایک بہتر مستقبل کیلئے بھی ہاتھ اٹھا کر دعا کرتے ہیں۔ تاہم وزیراعظم کے خظاب کے دوران ہی متعدد افراد نے اپنے غم و غصہ کا اظہار کیا اور کہا کہ اب تک زلزلہ کے دوران تاش کے پتوں کی طرح بکھر جانے والی عمارتوں کی تعمیر کرنے والوں کے خلاف اور مکانات کے انشورنس کے دعوے پیش کرنے کے باوجود رقومات کی ادائیگی میں تاخیر کیلئے کسی سے کوئی پوچھ گچھ نہیں کی جارہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT