Sunday , October 22 2017
Home / اضلاع کی خبریں / کرناٹک میں نوجوانوں کو ہنر مند بنانے کی اسکیم روبہ عمل

کرناٹک میں نوجوانوں کو ہنر مند بنانے کی اسکیم روبہ عمل

اقلیتوں میں شعور بیداری پر زور، چیرمین وکیشنل ٹریننگ سری دھر ہالپاکابیان
بیدر۔18؍دسمبر(سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ریاستی حکومت کی طرف سے نوجوانوں میں فروغ ہنر کو بڑھاوا دینے کیلئے ایک خصوصی کارپوریشن کرناٹک وکیشنل ٹریننگ اینڈ اسکیل ڈیولپمنٹ کارپوریشن کے نام سے قائم کیا گیا ہے۔ وزیر اعلیٰ سدرامیا کی راست نگرانی میں قائم کارپوریشن کیلئے ٹمکور کے مدھوگیری کے متوطن کانگریس لیڈر مرلی دھر ہالپا کو بطور چیرمین نامزد کیاگیا ہے۔ ہالپا نے اپنی کارپوریشن کی سرگرمیوں اور دیگر تفصیلات اردو اخبارات کے نمائندوںکو دیتے ہوئے اس بات پر زور دیاکہ ریاستی حکومت کی طرف سے نوجوانوں میں فروغ ہنر کو بڑھاوا دینے کیلئے اس کارپوریشن کے ذریعہ جو اسکیمیں لاگو کی جارہی ہیں ان کے بارے میں عوامی سطح پر اور خاص طور پر اقلیتوں میں بیداری لانے کی اشد ضرورت ہے۔انہوں نے بتایاکہ مرکزی حکومت ، ریاستی حکومت اور عالمی بینک کی مشترکہ فنڈنگ سے اس کارپوریشن کا سالانہ بجٹ تقریباً950کروڑ روپے ہے۔ اس کارپوریشن کے ذریعہ تعلیم کے مختلف شعبوں میں ڈپلو ما، یا اس کے مساوی سطح تک تکمیل کرنے والے نوجوانوں کی نشاندہی کرکے ان کیلئے روزگار کے مواقع مہیا کرائے جاتے ہیں۔ کارپوریشن نے اس کیلئے ضلعی سطح پر روزگار میلوں کے اہتمام کی پہل کی ہے۔ پہلا روزگار میلہ اسی جنوری کے دوران کاروار میں ہونے جارہا ہے۔  اس میلے میں 204کمپنیاں حصہ لے رہی ہیں۔ جہاں نوجوانوں کو روزگار کے ساتھ ان کی مالی امداد کرنے کیلئے مناسب قدم اٹھائے جائیں گے۔انہوں نے بتایاکہ اس کارپوریشن کے ذریعہ ایس ایس ایل سی ، پالیٹکنک ، آئی ٹی آئی ، پیارا میڈیکل ، فارمیسی وغیرہ کے شعبوں کے علاوہ میکانیکل اور آٹو موبائل زمرے میں ڈپلوما یا انجینئرنگ کرنے والے طلبا کو خصوصی تربیت سے آراستہ کیا جائے گا اور ساتھ ہی معروف کمپنیوں پر مشتمل روزگار میلوں کا نظم کارپوریشن کی طرف سے کیا جائے گا تاکہ تربیت مکمل کرنے والوں میں سے بیشتر کو بروقت ملازمت مل سکے۔ اگر ملازمت مل نہ پائی تو انہیں خود روزگار اپنانے میں ہر طرح کی رہنمائی کی جاسکے۔مسٹر مرلی دھر ہالپا نے بتایا کہ ریاست کے تمام اضلاع میں ہر ماہ کی دوسری سنیچر سلسلہ وار روزگار میلوں کا اہتمام ان کی کارپوریشن کی طرف سے کیا جائے گا۔ دوسرا میلہ شیموگہ میں اور تیسرا میلہ بلگاوی میں کرنے کا منصوبہ ہے۔انہوں نے کہاکہ تربیت سے فارغ ہونے والے نوجوانوں کو خود روزگار قائم کرنے کیلئے کرناٹکا اسٹیٹ فائنانس کارپوریشن کے ایم ڈی سی ، دیوراج ارس پسماندہ طبقات ترقیاتی کارپوریشن ، والمیکی درج فہرست قبائل ترقیاتی کارپوریشن، امبیڈکر درج فہرست ذاتوں کا ترقیاتی کارپوریشن اور دیگر اداروں کے ذریعہ فنڈنگ یقینی بنائی جائے گی۔خاتون امیدواروں کوا س فنڈنگ میں سے 35 فیصد تک کی سبسیڈی ملے گی۔ بیرون ممالک میں ملازمت کے خواہشمند نوجوانوں کوان کی مہارت کے حساب سے تربیت ہنر کے ساتھ انہیں انگریزی کی تربیت بھی خصوصی طور پر دی جاتی ہے۔ انہوں نے کہاکہ ریاستی حکومت کے کوشلیا مشن کے تحت کارپوریشن اپنی سرگرمیوں کی ریاست گیر پیمانے پر تشہیر کرے گی اور عوام میں بیداری لائے گی۔ اس کے علاوہ کرناٹک اور جرمن اشتراک سے بیروزگار نوجوانوں میں فروغ ہنر مندی کیلئے 350 کروڑ روپیوں کی لاگت پر ایک پراجکٹ قائم کیاجارہاہے، آنے والے دنوں میں اس طرح کے فروغ ہنر تربیتی مراکز بنگلور کے علاوہ منگلور، بلگاوی، دھارواڑاور کلبرگی میں قائم کئے جائیں گے۔اس موقع پر ٹمکور کی معروف شخصیت سابق جوائنٹ رجسٹرار آف کوآپریٹیو سوسائٹیز مشتاق احمد اور دیگر کانگریس کارکن بھی بڑی تعداد میں موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT