Wednesday , October 18 2017
Home / ہندوستان / ’’کرناٹک کیلئے الگ پرچم کا مطالبہ قومی نشان کی توہین نہیں ‘‘

’’کرناٹک کیلئے الگ پرچم کا مطالبہ قومی نشان کی توہین نہیں ‘‘

بی جے پی اورجے ڈی ایس پر غلط حوالوں کے استعمال کا الزام : سدارامیا
بنگلورو ، 19جولائی (سیاست ڈاٹ کام) ریاست کے لئے الگ پرچم کا کرناٹک حکومت کی جانب سے مطالبہ کرنے کے بعد چیف منسٹر سدارامیا نے آج کہا ہے کہ بی جے پی اور جنتادل ایس دستور کی غیر موجود شق کا حوالہ دے رہے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ریاست کے لئے علحدہ پرچم کے مطالبہ سے ہندوستان کے قومی نشان کی کوئی توہین نہیں ہوئی ہے ۔ انہو ں نے بنگالورو میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ علحدہ پرچم کا مطالبہ ہندوستان کے قومی نشانات کی توہین کسی بھی طرح نہیں ہے ۔ ہم ہمیشہ کی طرح قومی جھنڈے کا کافی احترام کریں گے ۔ دستور نے ریاست کے پرچم کے ہونے یا نہ ہونے کے بارے میں کچھ بھی نہیں کہا ہے پھر کیوں بی جے پی اور جے ڈی ایس غیرموجود قانونی شق کا حوالہ دیر ہے ہیں۔ 6جون کو ہم نے ریاستی پرچم کے پیانل کی تشکیل کا فیصلہ کیا ہے ۔ یہ کسی سیاسی مقصد کے لئے نہیں ہے ۔ ہمیشہ قومی پرچم ہی اونچا رہے گا۔ تاہم بی جے پی نے دعوی کیا کہ دستور ایسے کسی بھی قدم کی اجازت نہیں دیتا۔ گذشتہ روز میڈیا سے بات کرتے ہوئے کرناٹک بی جے پی کے ترجمان ایس پرکاش نے کہا کہ سدارامیا اس مسئلہ پر غیر ضروری تنازعہ پیدا کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ریاست کے لئے علحدہ پرچم کی ملک کا آئین اجازت نہیں دیتا۔ ملک کا قومی پرچم ہے جس کا ہم تمام احترام کرتے ہیں۔ ہمیں امید ہے کہ کانگریس پارٹی قومی جذبہ کی نمائندگی کرتی ہے اس طرح کی حرکتوں میں ملوث نہیں ہوگی۔ اسی دوران کرناٹک حکومت نے 9رکنی کمیٹی تشکیل دی ہے تاکہ ریاست کے لئے علحدہ پرچم کو ڈیزائن کرنے کے امکانات پر ریاستی حکومت کو رپورٹ پیش کی جاسکے ۔

TOPPOPULARRECENT