Wednesday , September 20 2017
Home / ہندوستان / کرناٹک کے وزیر کی 64 جائیدادوں پر انکم ٹیکس دھاوے، 10 کروڑ ضبط

کرناٹک کے وزیر کی 64 جائیدادوں پر انکم ٹیکس دھاوے، 10 کروڑ ضبط

گجرات کے 44 ارکان اسمبلی کی نگرانی کرنے والے شیوا کمار کو تفریح گاہ سے گھر لایا گیا، دہلی میں بھی تلاشی

بنگلورو ۔ 2 اگست (سیاست ڈاٹ کام) محکمہ انکم ٹیکس نے ٹیکس کی عدم ادائیگی کے ایک مقدمہ میں کرناٹک کے وزیرتوانائی ڈی کے شیواکمار کی 64 جائیدادوں اور رہائش گاہوں پر آج دھاوے کیا۔ شیواکمار بنگلور کے قریب اس تفریح گاہ کے مالک ہیں جہاں گجرات سے تعلق رکھنے والے کانگریس کے 44 ارکان کو ٹھہرایا گیا ہے۔ انکم ٹیکس کے عہدیداروں نے دعویٰ کیا ہیکہ وزیر توانائی سے مربوط مختلف جائیدادوں اور ٹھکانوں پر دھاوؤں کے دوران 10 کروڑ روپئے برآمد ہوئے ہیں۔ ٹیکس عہدیدار اس وزیر کو آج صبح تفریح گاہ سے ان کے گھر لے گئے تھے۔ قریب ہی واقع ایک کالج میں ایک ٹیچر کے لاکر سے کافی مقدار میں زیورات بھی برآمد ہوئے ہیں۔ یہ لاکر شیواکمار کے ایک رشتہ دار کے نام پر ہے۔ دہلی کے صفدر جنگ انکلیو کے دو مقامات کے علاوہ ہاسن اور مئیسورو میں برآمد نقد رقم کی گنتی کے لئے نصف درجن نوٹ گننے کے مشین لائے گئے ہیں۔ دہلی سے 7.9 کروڑ روپئے برآمد ہوئے جبکہ کرناٹک کے مختلف مقامات سے 2.23 کروڑ روپئے برآمد ہوئے۔ اس کارروائی سے منسلک عہدیداروں نے کہا کہ یہ محکمہ ٹیکس نادہندگی کے علاوہ ریئل اسٹیٹ اور دیگر شعبوں میں شیواکمار کی جانب سے بہت بڑے پیمانے پر غیرمعلنہ سرمایہ کاری کی تحقیقات کررہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بعض شل ادارے اور ان کے چلانے والے بھی جو اس کیس سے مربوط ہیں، ان کی بھی تحقیقات کی جارہی ہیں۔ عہدیداروں نے کہا کہ آئی ٹی حکام وزیرشیواکمار سے پوچھ گچھ کے لئے ایگلسٹن ریزاٹ پہنچے تھے جہاں وہ کل رات دہلی سے واپسی کے بعد رات کا قیام کررہے تھے۔ شیواکمار ان 44 ارکان اسمبلی کی نگرانی کررہے ہیں تاکہ انہیں بی جے پی کے ہاتھوں چھین لئے جانے سے بچانے کیلئے رکھا گیا ہے۔ تلاشی کے وقت وہ اس مقام پر ہی موجود تھے۔ عہدیداروں نے کہا کہ اس مقام پر پنچنامہ تیار کیا گیا ہے جہاں وزیرشیواکمار چند کاغذات پھاڑتے ہوئے پائے گئے تھے۔ ایک عہدیدار نے کہا کہ ایک پھٹے ہوئے کاغذ کو جزوی طور پر جوڑتے ہوئے بحال کیا گیا ہے جس کا تجزیہ کیا جارہا ہے۔ عہدیداروں نے کہا کہ اس تفریح گاہ یا اس میں ٹھہرائے گئے ارکان اسمبلی کی کوئی تلاشی نہیں لی گئی بلکہ وہاں موجود وزیر کے کمرے پر دھاوا کیا گیا۔ محکمہ انکم ٹیکس نے کہا کہ تلاشی ٹیم کو ارکان اسمبلی سے کوئی لینا دینا نہیں تھا۔ ارکان اسمبلی اور تلاشی ٹیم میں شامل افسران کے مابین کوئی رابطہ نہیں ہوا۔

وزیر کے گھر دھاوے غیرجمہوری: سدارامیا
بنگلور2اگست (سیاست ڈاٹ کام) کرناٹک کے وزیراعلی سدارامیا نے ریاست کے وزیر توانائی ڈی کے شیواکمار کی قیام گاہ پر آئی ٹی کے چھاپوں کو غیر جمہوری قراردیا۔آئی ٹی کے افسروں نے کرناٹک کے وزیر توانائی ڈی کے شیوکمار کی قیاگاہ اور بنگلور کی پرائیویٹ ریزاٹ پر چھاپے مارے جہاں گجرات کانگریس کے 44قانون ساز مقیم ہیں۔سدارامیا نے کہا کہ یہ بی جے پی کی عادت بن چکی ہے کہ اس کے خلاف آواز بلند کرنے والے افراد کے خلاف آئی ٹی کے چھاپے مارے جائیں ۔انہوں نے آئی ٹی کے چھاپوں کی پالیسی کو جمہوریت کے خلاف قرار دیا۔

کرناٹک میں مرکزی فورس کی کارروائی پر احتجاج
نئی دہلی، 2 اگست (سیاست ڈاٹ کام) کرناٹک کے دارالحکومت بنگلور کے ایک ریزورٹ پر محکمہ انکم ٹیکس کی چھاپہ ماری کے دوران مرکزی دستہ بھیجے جانے کی مخالفت میں کانگریس نے آج راجیہ سبھا میں جم کر ہنگامہ کیا، جس کی وجہ سے وقفہ صفر میں خلل پڑا اور وقفہ سوال نہیں چل سکا اور چار بار ملتوی کے بعد ایوان کی کارروائی کل تک کے لئے ملتوی کر دی گئی۔ وقفہ صفر اور وقفہ سوال میں کانگریس کے ہنگامے کی وجہ سے ایوان کی کارروائی دو بجے تک کیلئے ملتوی کر دی گئی اور وقفے کے بعد کارروائی پھر شروع ہونے پر کانگریس کے ارکان نے پہلے کی طرح ایوان میں نعرے بازی کرنی شروع کر دی۔ انہوں نے حکومت پر الزام لگایا کہ امن و قانون ریاست کا حق ہے لیکن مودی حکومت نے مرکزی فورس بھیج کر آئین کی خلاف ورزی کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT