Saturday , August 19 2017
Home / اضلاع کی خبریں / کریم نگر میں چھوٹے تاجران کو ہراسانی

کریم نگر میں چھوٹے تاجران کو ہراسانی

عہدیداروں کے اچانک دھاوے، ایک ہی دن میں ایک کروڑ روپئے جرمانہ

کریم نگر۔ /6 جولائی، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) اشیائے ضروریہ دال، شکر اور تیل کے علاوہ دیگر غذائی اشیاء کے زیرو کاروبار بغیر کسی ٹیکس کی ادائیگی کے خرید وفروخت کے کاروبار کے سلسلہ میں روزانہ اخبارات میں خبریں شائع ہوتی رہتی ہیں دو دن قبل بھی روز نامہ ’سیاست‘ میں یہ خبر شائع ہوچکی ہے جس کی وجہ متعلقہ عہدیداروں اور زیرو کاروبار سے منسلک بیوپاریوں میں ہراسانی پھیل گئی تھی۔ اس طرح کے غیر قانونی کاروبار کے سلسلہ میں ڈسٹرکٹ کلکٹر نے بھی سخت اقدامات کا حکم دیا تھا لیکن متعلقہ عہدیداروں کے نظرانداز کرنے کے طریقہ کار پر اخبارات میں خبر شائع ہونے کے بعد کلکٹر نے اچانک تنقیح کا منصوبہ بناکر تین خصوصی ٹیموں کو تشکیل دیا اور الگ الگ مقامات پر انہیں بھیجا۔ حیدرآباد کی جانب رینو گنٹہ ٹول گیٹ، منچریال کی جانب رائے پٹنم اور جگتیال کی طرف کٹہ پلی، کریم نگر کے قدیم گنج عہدیداروں نے دھاوا کردیا۔ کریم نگر کی جانب سے آنے والی تمام لاریوں کو روک پر ان کی تنقیح کی کُل 534 وے بلس کی جانچ کی بارہ گھنٹوں میں دو لاریوں میں لدے 30لاکھ مالیتی اشیائے خوردنی پر پانچ فیصد ٹیکس عائد کرکے معہ جرمانہ ایک لاکھ چالیس ہزار روپئے وصول کئے ۔ دو ٹرانسپورٹس کے ذمہ داران کو نوٹس جاری کی گئی۔ مزید پانچ لاریوں کو رینوگنٹہ میں سیز کردیا گیا اور گرام رکھشک دلوں کے حوالے کردیا گیا۔ ان لاریوں میں تقریباً 80 لاکھ روپئے کا سامان تھا۔ رینو گنٹہ میں ہی بغیر وے بل ایک لاری پکڑی گئی جس میں 660 بیاگس گٹکھے کے رکھے ہوئے تھے جس کی مالیت 22لاکھ روپئے ہے کسی سیاسی قائد کی فون پر سفارش پر چھوڑ دیا جارہا تھا اسے بھی پکڑ لیا گیا۔ اس طرح ایک ہی دن میں خصوصی ٹیموں نے ایک کروڑ مالیت کی اشیاء ضبط کرنے میں کامیابی حاصل کی۔

TOPPOPULARRECENT