Thursday , July 20 2017
Home / شہر کی خبریں / ’ کری پتہ‘ انسانی صحت کیلئے مضر جراثیم کش ادویات کا چھڑکاؤ جان لیوا

’ کری پتہ‘ انسانی صحت کیلئے مضر جراثیم کش ادویات کا چھڑکاؤ جان لیوا

حیدرآباد۔/15فبروری، ( سیاست نیوز) ہندوستانی کھانوں میں سب سے زیادہ استعمال ہونے والا ’ کری پتہ‘ اب انسانی صحت کیلئے مضر بن گیا ہے۔ کری پتہ کو زہرآلود بنانے کیلئے اس کی پیداوار میں استعمال کی جانے والی جراثیم کش ادویات کا چھڑکاؤ ہے۔ زہرآلود جراثیم کش ادویات سے کینسر لاحق ہورہا ہے اور طویل مدت میں یہ کری پتہ صحت کیلئے مسائل پیدا کرنے کا باعث بنتا جارہا ہے۔ پروفیسر جئے شنکر اگریکلچرل یونیورسٹی میں ریسرچ کرنے والوں نے اپنے ایک تحقیقی جائزہ میں انکشاف کیا ہے کہ کری پتہ کی پیداوار کیلئے استعمال کیا جانے والا کیمیائی پاؤڈر انسانی صحت کیلئے نقصاندہ ہے۔ جائزہ میں بتایا گیا ہے کہ کسان 50 مضر کیمیکلس کا استعمال کررہے ہیں اور ان کیمیکلس کے ذریعہ وہ ’ کری پتہ ‘ کی پیداوار میں رکاوٹ بننے والے جراثیم کیڑے مکوڑوں کو ختم کررہے ہیں۔ دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد کے تین اضلاع میدک، گنٹور اور اننت پور سے حاصل کردہ کری پتوں کے 75 نمونوں کا جائزہ لیا گیا۔ اس کی تحقیق سے پتہ چلا ہے کہ تمام نمونوں میں زیادہ تر ایک ہی کیمیکل پایا گیا جو صحت کیلئے نقصاندہ ہے۔ گنٹور میں سب سے زیادہ کیمیکل استعمال کیا جاتا ہے۔ سائنسدانوں نے عوام کو مشورہ دیا ہے کہ وہ پکوان سے قبل کری پتہ کو پانی میں چھوڑ دیں اور پندرہ منٹ کے بعد اسے اچھی طرح دھوکر استعمال کریں۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT