Sunday , September 24 2017
Home / ہندوستان / کشمیر شاہراہ چھٹے روز بھی بند، ہزاروں مسافر پھنسے

کشمیر شاہراہ چھٹے روز بھی بند، ہزاروں مسافر پھنسے

سری نگر 13مارچ (سیاست ڈاٹ کام) وادئ کشمیر کو بیرون دنیا سے جوڑنے والی تین سو کلو میٹر طویل سری نگر۔ جموں قومی شاہراہ پیر کو مسلسل چھٹے روز بھی گاڑیوں کی آمدورفت کے لئے بند رہی۔ جن گاڑیوں کو اتوار کی صبح جموں سے کشمیر کی طرف جانے کی اجازت دی گئی تھی، میں سوار ہزاروں مسافر شاہراہ کے مختلف مقامات پر پھنسے ہوئے ہیں۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق جہاں مقامی انتظامیہ مسافروں کو کوئی راحت پہنچانے میں ناکام ہوئی، وہیں رام بن کے مقامی دارالعلوم نے سینکڑوں مسافروں کو طعام اور دیگر سہولیات فراہم کی ہیں۔ ایک ٹریفک پولیس عہدیدار نے یو این آئی کو بتایا کہ شاہراہ بدستور بند پڑی ہے ۔ رات کے دوران کئی ایک مقامات بشمول رام بن اور رامسو میں ایک بار پھر مٹی کے تودے گرآئے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ جو گاڑیاں اتوار کو جموں سے سری نگر کی طرف روانہ ہوئی تھیں، کو محفوظ مقامات پر روک دیا گیا ہے ۔ دریں اثنا جواہر ٹنل کے اس پار مختلف مقامات بشمول قاضی گنڈ اور اننت ناگ میں گذشتہ ایک ہفتے سے درماندہ پڑی گاڑیاں بشمول ٹرکیں اور تیل کے خالی ٹینکرس بدستور ایک ہی جگہ پر رکی ہوئی ہیں۔ کشمیر شاہراہ 7 اور 8 مارچ کی درمیانی شب کو بارشوں کی وجہ سے مٹی کے تودے اور پتھر گرآنے کے بعد گاڑیوں کی آمدورفت کے لئے بند کی گئی تھی۔

TOPPOPULARRECENT