Thursday , August 24 2017
Home / سیاسیات / کشمیر میں امن یقینی بنانے وزیراعظم پہل کریں: کانگریس

کشمیر میں امن یقینی بنانے وزیراعظم پہل کریں: کانگریس

نئی دہلی۔17 اگست (سیاست ڈاٹ کام) کشمیر میں جاری تشدد پر قابو پانے کے لئے بات چیت پر زور دیتے ہوئے کانگریس نے آج کہا کہ وزیراعظم نریندر مودی کو یہ بات یقینی بنانی چاہئے کہ دیگر باتوں جیسے بلوچستان کے بارے میں کچھ بھی کہنے سے پہلے وادی کشمیر میں امن کو یقینی بنائیں۔ وزیراعظم کسی اور موضوع پر بات چیت کررہے ہیں۔ جبکہ ان کے گھر میں آگ لگی ہوئی ہے۔ سینئر کانگریس قائد غلام نبی آزاد نے مطالبہ کیا کہ مقامی عوام کے ساتھ بات چیت کے ذریعہ ہندوستان کے تاج کو بچانا ضروری ہے۔ وزیراعظم بین الاقوامی شخصیت ہیں (جبکہ وہ بیرون ملک دوروں پر ہوتے ہیں) انہیں چاہئے کہ اس صرورتحال پر توجہ مرکوز کریں جو بری ہے۔ قائد اپوزیشن راجیہ سبھا کانگریس کے ہیڈ کوارٹرس پر پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے۔ ان سے یوم آزادی تقریر میں وزیراعظم کے بلوچستان اور پاکستانی مقبوضہ کشمیر کا حوالہ دینے کے بارے میں سوال کیا گیا تھا۔ آزاد نے کہا کہ مودی کو پہلے اس بات کو یقینی بنانا چاہئے کہ وادی کی صورتحال پر قابو پایا جاتا ہے اس کے بعد دیگر مقامات پر کے بارے میں بات کرنی چاہئے۔ روزانہ چند افراد ہلاک ہورہے ہی۔ں چاہے وہ فوجی ہوں یا شہری، ہمارے عوام ہیں۔ ہم ان کے بارے میں ایک لفظ بھی نہیں کہہ سکتے۔ سابق چیف منسٹر جموں و کشمیر غلام نبی آزادی نے کہا کہ مودی نے پاکستان سے بات چیت سے پہلے ہی سیاست شروع کردی ہے۔ انہوں نے وزیراعظم نواز شریف کی اپنی تقریب حلف برداری میں خیرمقدم کے لئے سرخ غالین بچھا گیا تھا۔ یہاں تک کہ انہوں نے پاکستان میں ایک شادی میں بھی شرکت کی تھی لیکن وہ ہندوستان کے تاج کو بچانے کے بارے میں کچھ بھی نہیں کہہ رہے ہیں۔ انہیں 6 مواقع حاصل ہوئے۔ حال ہی میں اختتام پذیر مانسون اجلاس میں وہ کشمیر کے بارے می تقریر کرسکتے تھے لیکن وہ اپنے کمرے تک محدود رہے۔انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ میں بحث پر مجبور کرنے والی اپوزیشن ہی تھی۔ ایک اور سوال کے جواب میں آزاد نے کہا کہ پی چدمبرم کا بیان وہ پڑھ چکے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT