Friday , August 18 2017
Home / Top Stories / کشمیر میں نماز عید کے بعد پرتشدد جھڑپیں

کشمیر میں نماز عید کے بعد پرتشدد جھڑپیں

سنگباری میں 6 افراد بشمول پولیس سپرنٹنڈنٹ زخمی
سرینگر ۔ 6 ۔ جولائی : ( سیاست ڈاٹ کام ) : وادی کشمیر میں آج نماز عید کی ادائیگی کے بعد احتجاجیوں اور سیکوریٹی فورسیس میں جھڑپوں کے دوران 6 افراد بشمول ایک سینئیر پولیس آفیسر زخمی ہوگئے ۔ پولیس نے بتایا کہ ضلع اننت ناگ کے جنگل منڈی میں سنگباری کے دوران ایڈیشنل پولیس سپرنٹنڈنٹ مبشر بخاری کے پیٹ پر زخم آئے ۔ جب کہ شہر کے مضافات میں حیدرپورہ چوک پر احتجاجیوں کے ساتھ تصادم میں ایک کانسٹبل بھی زخمی ہوگیا ۔ علاوہ ازیں شہر میں عیدگاہ کے قریب صفاء کدال میں سنگباری کرنے والے ہجوم کو منتشر کرنے کے لیے سیکوریٹی فورسیس نے آنسو گیس شل داغے جس میں 4 افراد بشمول فوٹو جرنلسٹ زخمی ہوگئے ۔ انہوں نے بتایا کہ تمام زخمیوں کو SMHS ہاسپٹل میں شریک کروایا گیا ہے ۔ تاہم وادی کشمیر کے مابقی علاقوں میں صورتحال پرامن رہی ۔ دریں اثناء حکام نے سرکردہ علحدگی پسند قائدین بشمول سید علی گیلانی ، میر واعظ میر فاروق اور محمد یسین ملک کو نقص امن کے خدشہ سے گھروں پر نظر بند کردیا کیوں کہ عیدگاہ پر ہجوم کو اکسانے سے تشدد پھوٹ پڑسکتا تھا ۔۔

TOPPOPULARRECENT