Thursday , August 24 2017
Home / پاکستان / کشمیر کا مسئلہ علاقہ میں بے چینی کی اصل وجہ ‘ نواز شریف

کشمیر کا مسئلہ علاقہ میں بے چینی کی اصل وجہ ‘ نواز شریف

پاکستان مسئلہ کے پرامن حل کے عہد کا پابند۔ وزیر اعظم پاکستان کا آذر بائیجان میں بیان
اسلام آباد 15 اکٹوبر ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر اعظم پاکستان نواز شریف نے آج کہا کہ ان کا ملک ہندوستان کے ساتھ بات چیت کیلئے تیار ہے اگر ہندوستان مسئلہ کشمیر کو حل کرنے میں سنجیدہ ہو ۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر کا مسئلہ ہی علاقہ میں بے چینی کی اصل وجہ ہے ۔ نواز شریف ان دنوں آذربائیجان کے سہ روزہ دورہ پر تھے جس کی تکمیل پر باکو میں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان نے کئی موقعوں پر ہندوستان کے ساتھ تمام متنازعہ مسائل پر بات چیت کی پیشکش کی ہے لیکن ہندوستان نے مثبت رد عمل کا اظہار نہیں کیا ۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر علاقہ میں بے چینی کی اصل وجہ ہے اور ہندوستان کو چاہئے کہ وہ اس مسئلہ کے حل کیلئے سنجیدگی کا مظاہرہ کرے اور اقوام متحدہ سلامتی کونسل کی قرار دادوں کے تحت اپنے عہد کا احترام کرے ۔ خبر رساں ادارے اے پی نے نواز شریف کا یہ کہتے ہوئے حوالہ دیا ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان مسئلہ کشمیر کے پرامن حل کے عہد کا پابند ہے ۔ انہوں نے ہندوستان کے اس الزام کو مسترد کردیا کہ اوری میں ہندوستانی فوج کے کیمپ پر ہوئے حملہ کیلئے پاکستان ذمہ دار ہے ۔ نواز شریف نے کہا کہ ہندوستان نے اس حملہ کے چھ گھنٹوں کے اندر پاکستان کے خلاف اس میں ملوث رہنے کا الزام عائد کردیا ہے ۔ وزیر اعظم پاکستان نے یہ بھی ادعا کیا کہ لائین آف کنٹرول پر کوئی در اندازی بھی پیش نہیں آ رہی ہے ۔ نواز شریف نے یہ ریمارکس ایسے وقت میں کئے ہیں جبکہ دونوں ملکوں کے مابین تعلقات کشیدہ ہوگئے ہیں ۔ اوری میں دہشت گردوں نے ایک سکیوریٹی کیمپ پر حملہ کیا تھا جس میں 19 سپاہی ہلاک ہوگئے تھے ۔ اس حملے کے بعد ہندوستان نے لائین آف کنٹرول کے پار مقبوضہ کشمیر میں دہشت گردوں کے ٹھکانوں کو نشانہ بناتے ہوئے سرجیکل حملے کئے تھے ۔

TOPPOPULARRECENT