Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / کشمیر کا کیس: مرکز کو 30 ہزار روپئے ادا کرنے کی ہدایت

کشمیر کا کیس: مرکز کو 30 ہزار روپئے ادا کرنے کی ہدایت

نئی دہلی ۔ 6 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے آج ایک پی آئی ایل پر اپنا جواب داخل کرنے میں ناکامی پر مرکز کو 30 ہزار روپئے کی ادائیگی کا حکم دیا۔ یہ پی آئی ایل میں الزام عائد کیا گیا ہیکہ جموں و کشمیر میں اکثریتی مسلمان اقلیتی فوائد سے استفادہ کررہے ہیں۔ چیف جسٹس جے ایس کیہر اور جسٹس این وی رمنا پر مشتمل بنچ نے مرکز کے کونسل کو یہ اجازت بھی دی کہ یہ رقم اندرون دو ہفتے جمع کرادینے کے بعد جواب داخل کریں اور نشاندہی کی کہ اسی وجہ کیلئے گذشتہ مرتبہ 15 ہزار روپئے کا جرمانہ بھی عائد کیا گیا تھا۔ بنچ نے کہا کہ چونکہ یہ معاملہ بہت اہم ہے اور وہ مرکز کو جواب داخل کرنے کیلئے آخری موقع عطا کررہے ہیں۔ قبل ازیں عدالت نے مرکز، ریاستی حکومت اور قومی کمیشن برائے اقلیتیں کو جموں کے ایڈوکیٹ انکور شرما کی دائر کردہ عرضی پر نوٹس جاری کئے تھے۔ درخواست گذار نے الزام عائد کیا ہیکہ جو فوائد اقلیتوں کیلئے مختص ہیں۔ ان سے مسلمان مستفید ہورہے ہیں جو جموں و کشمیر میں اکثریت میں ہیں۔

TOPPOPULARRECENT