Wednesday , September 20 2017
Home / ہندوستان / کشمیر کے بغیر بات چیت نہیں ہوسکتی:سرتاج عزیز

کشمیر کے بغیر بات چیت نہیں ہوسکتی:سرتاج عزیز

اسلام آباد ۔ 8 ۔ ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) ہند۔پاک سیکوریٹی مذاکرات کے موقع پر اشتعال انگیز تبصرہ کرتے ہوئے پاکستان کے قومی سلامتی مشیر سرتاج عزیز نے آج کہا کہ وزیراعظم نریندر مودی مذاکرات کیلئے ہم پر شرائط مسلط کرنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مذاکرات کے ایجنڈہ میں کشمیر کو شامل کئے جانے تک بات چیت ہمارے لئے قابل قبول نہیں ہوگی۔ سرتاج عزیز کے حوالہ سے ڈان نیوز نے بتایا کہ نریندر مودی نے مخالف پاکستان پلیٹ فارم پر انتخابی مقابلہ کیا تھا اور اب وہ چاہتے ہیں کہ پاکستان کے ساتھ مذاکرات کیلئے اپنی شرائط مسلط کریںلیکن ہم اسے کبھی قبول نہیں کریں گے۔ ہم نے اپنے اس موقف سے نئی دہلی کو پہلے ہی واقف کرادیا ہے ۔ انہوںنے یہ بھی کہا کہ ہندوستان کی کسی بھی غلط مہم جوئی کا موثر جواب دیا جائے گا۔ سرتاج عزیز نے گزشتہ ماہ کہا تھا کہ دونوں ممالک کے مابین قومی سلامتی مشیر سطح کی بات چیت ہندوستان کے غیر لچکدار موقف کی وجہ سے منسوخ ہوئی ہے کیونکہ ہندوستان نے کشمیر پر بات چیت سے انکار کردیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ جب تک کشمیر کو ایجنڈہ کا حصہ نہ بنایا جائے تب تک ہندوستان کے ساتھ کامیاب بات چیت نہیں ہوسکتی۔انہوں نے داؤد ابراہیم کے پاکستان میں موجود ہونے کے ہندوستانی الزام کو مسترد کردیا اور کہا کہ وزیراعظم نریندر مودی زیر قیادت حکومت کی پالیسی پہلے دن سے مخالف پاکستان ہے۔

TOPPOPULARRECENT