Sunday , August 20 2017
Home / ہندوستان / کلکرنی پر شیوسینا حملہ ، ہندوستانی جمہوریت کیلئے شرمناک

کلکرنی پر شیوسینا حملہ ، ہندوستانی جمہوریت کیلئے شرمناک

دستور کا مذاق، پولیس کیلئے باعث شرم، شبانہ اعظمی، مہیش بھٹ
ممبئی ۔ 12 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) سرکردہ بی جے پی لیڈر و سابق نائب وزیراعظم ایل کے اڈوانی کے سابق مشیر سدھیندر کلکرنی پر شیوسینا کارکنوں کی طرف سے سیاہی پھینکے جانے کے واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے بالی ووڈ کی مشہور شخصیات بشمول شبانہ اعظمی و مہیش بھٹ نے اس واقعہ کو ہندوستان جیسے جمہوری ملک کیلئے شرمناک قرار دیا۔ واضح رہیکہ مفکر ادارہ آبزرور ریسرچ فاونڈیشن کے چیرمین سدھیندر کلکرنی پر شیوسینا کے کارکنوں نے آج اس وقت کالک پوت دیا تھا جب انہوں نے پاکستان کے سابق وزیرخارجہ خورشید محمود قصوری کی کتاب ’’نہ عقاب اور نہ ہی فاختہ‘‘ کی ممبئی میں رسم اجرائی تقریب منسوخ کرنے سے انکار کردیا تھا۔ فلمساز مہیش بھٹ نے کہا کہ اس حملہ نے ہندوستان کے جمہوری موقف کے بارے میں ہر کسی کو حیرت میں ڈال دیا ہے۔ مہیش بھٹ نے ٹوئیٹر پر لکھا کہ ’’اس حملہ نے ہمارے دستور کا مذاق اڑایا ہے۔ پولیس کو شرمسار کردیا ہے اور جمہوریت سے متعلق ہمارے دعوؤں کی قلعی کھول دی ہے‘‘۔ اس واقعہ پر شدید رنج و غم کی شکار اداکارہ شبانہ اعظمی نے کہا کہ انہوں نے ادھو ٹھاکرے اور آدتیہ ٹھاکرے سے رابطہ پیدا کرنے کی کوشش کی لیکن کسی نے بھی ان کے کال کا جواب نہیں دیا۔ گلوکار سونا مہاپاترا نے کہا کہ ’’ڈیر شیوسینا، سدھیندر کلکرنی پر سیاہی پھینکنے سے آپ محب وطن نہیں بن جاتے۔ رشی کپور نے ٹوئیٹر پر لکھا ’’مجھے معاف کیجئے۔ یہ مضحکہ خیز اور ناقابل معافی ہے‘‘۔

TOPPOPULARRECENT