Sunday , July 23 2017
Home / Top Stories / کلگام میں فائرنگ6ہلاک ‘ جنوبی کشمیر میں دھماکہ 3زخمی

کلگام میں فائرنگ6ہلاک ‘ جنوبی کشمیر میں دھماکہ 3زخمی

ضروری طبی کارروائیوںکے بعد نعشیں ورثاکے سپرد ‘ سیدہ آباد دھماکہ کے زخمی دواخانہ میں شریک
سری نگر ، 14مئی (سیاست ڈاٹ کام) جنوبی کشمیر کے ضلع کولگام میں 6 مئی کی رات جنگجوؤں اور جموں وکشمیر پولیس کے درمیان ہونے والے شوٹ آوٹ میں زخمی ایک اور شہری اسپتال میں دم توڑ گیا ہے ۔ اس طرح سے کولگام کے مصروف ترین میر بازار میں ہونے والے اس ہلاکت خیز شوٹ آوٹ میں ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد بڑھ کر 6 ہوگئی ہے ۔ مہلوکین میں چار عام شہری، ایک پولیس اہلکار اور لشکر طیبہ کا ایک مطلوب ترین جنگجو شامل ہیں۔ سرکاری ذرائع نے یو این آئی کو بتایا کہ محمد حسین ڈار نامی شہری جو 6 مئی کی رات کو میربازار کولگام میں ہونے والے شوٹ آوٹ میں زخمی ہوگیا تھا، ایک ہفتے تک سری نگر کے شیر کشمیر انسٹی چیوٹ آف میڈیکل سائنسز میں موت و حیات کی کشمکش میں مبتلا رہنے کے بعد اتوار کی صبح دم توڑ گیا۔ انہوں نے بتایا کہ محمد حسین ضلع اننت ناگ کے کھیرون مالپورہ کا رہنے والاتھا۔سرکاری ذرائع نے مزید بتایا کہ طبی لوازمات کی ادائیگی کے بعد لاش آخری رسومات کی ادائیگی کے لئے ورثاء کو سپرد کی گئی ہے ۔ 6 اپریل کو شام دیر گئے ایک پولیس پارٹی ایک سڑک حادثے کی تحقیقات اور ٹریفک جام کو کلیئر کرنے کی غرض سے میربازار گئی تھی جہاں ایک کار کے ذریعے سفر کررہے تین جنگجوؤں نے ان پر فائرنگ کی تھی۔طرفین کے مابین گولہ باری کا تبادلے میں دو عام شہری اور ایک پولیس کانسٹیبل موقعے پر ہی ہلاک جبکہ چار دیگر زخمی ہوگئے تھے ۔ زخمیوں میں سے ایک اور شہری 7 اپریل کی صبح اسپتال میں دم توڑ گیا تھا۔فائرنگ کے تبادلے میں ایک جنگجو کو مارا گیا تھا جس کی شناخت فیاض احمد ساکنہ ریشی پورہ کیموہ کولگام کے بطور کی گئی تھی۔ فیاض2015 ء میں جموں سری نگر قومی شاہراہ پر ضلع ادھم پور میں بارڈر سیکورٹی فورس (بی ایس ایف) کے قافلے پر ہونے والے جنگجویانہ حملے میں ملوث تھا۔اس پر الزام تھا کہ اس نے حملہ انجام دینے والے جنگجوؤں کو ٹرک کے ذریعے ادھم پور پہنچایا تھا۔ قومی تفتیشی ایجنسی (این آئی اے ) نے اس پر دو لاکھ روپے کا انعام مقرر کیا تھا۔ادھم پورہ کے حملے کے بعد طرفین کے مابین ہونے والی جھڑپ میں ایک جنگجو کو ہلاک جبکہ ایک پاکستانی جنگجو نوید کو زندہ گرفتار کیا گیا تھا۔جموں و کشمیر میں پلوامہ کے ترال میں گزشتہ رات ایک مشتبہ بم دھماکے میں تین شہری زخمی ہو گئے ۔ سرکاری ذرائع نے آج بتایا کہ یہ دھماکہ سید آباد گاؤں میں ہوا۔ زخمیوں کو مقامی ہسپتال لے جایا گیا جہاں شدید زخمی آزاد احمد راتھر کو بہتر علاج کے لئے سرینگر بھیج دیا گیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ دھماکے کی وجوہات کا ابھی پتہ نہیں چل پایا ہے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT