Tuesday , June 27 2017
Home / شہر کی خبریں / کم عمر بچے انٹرنیٹ پر فحش مواد دیکھنے میں مصروف

کم عمر بچے انٹرنیٹ پر فحش مواد دیکھنے میں مصروف

پولیس کے 50 انٹرنیٹ سنٹرس پر دھاوے، بچوں کی آج والدین اور اساتذہ کی موجودگی میں کونسلنگ
حیدرآباد /13 ڈسمبر ( سیاست نیوز ) مشن چبوترہ کے کامیاب تجربہ کے بعد اب پولیس ساؤتھ زون نے اپنی توجہ انٹرنیٹ سنٹرس پر مرکوز کرتے ہوئے کم عمر بچوں کو عریاں تصاویر اور ویڈیوز دیکھنے کی اجازت دینے والے انٹرنیٹ کیفے کے مالکین کے خلاف کارروائی کی ۔ آج شام 6.30 سے رات 8.30 بجے تک ساؤتھ زون کے تمام پولیس اسٹیشن میں بیک وقت 50 انٹرنیٹ سنٹرس پر دھاوا کرتے ہوئے 65 کم عمر بچوں کو حراست میں لے لیا ۔ ڈپٹی کمشنر پولیس ساؤتھ زون مسٹر وی ستیہ نارائنا کی نگرانی میں کئے گئے اس آپریشن میں 16 انٹرنیٹ سنٹر کے مالکین کے خلاف تعزیرات ہند کے دفعات 292( عریاں اور فحش مواد گشت کروانا ) کے تحت مقدمہ درج کرتے ہوئے انہیں حراست میں لے لیا گیا ہے جبکہ دیگر 14 انٹرنیٹ سنٹرس کے مالکین کے خلاف سٹی پولیس ایکٹ کے تحت مقدمات درج کئے گئے ۔ بتایا جاتا ہے کہ اسکول اور کالج پراجکٹ اور زیراکس کاپیز کروانے کے بہانے کم عمر بچے انٹرنیٹ سنٹرز پر اپنا وقت ضائع کرتے ہوئے فحش مواد کا مشاہدہ کر رہے تھے ۔ بعض والدین کی جانب سے اس سلسلے میں شکایت درج کروانے پر ساؤتھ زون پولیس نے فوری حرکت میں آکر یہ خصوصی کارروائی کی ۔ ڈی سی پی مسٹر ستیہ نارائنا نے بتایا کہ کئی انٹرنیٹ سنٹرس قانون کی کھلی خلاف ورزی کر رہے ہیں ۔ جس میں سی سی ٹی وی کی تنصیب کرنا لازم ہے ۔18 سال سے کم عمر بچوں کو انٹرنیٹ سنٹرس پر اپنا وقت ضائع کرنے کی اجازت دینے والے انٹرنیٹ کیفے مالکین کے خلاف سخت کارروائی کا انتباہ دیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ انٹرنیٹ کم عمر بچوں کے مستقبل کو تاریکی میں ڈالنے کا ایک ذریعہ ہے جسے پولیس ہرگز برداشت نہیں کرے گی ۔ انٹرنیٹ سنٹر سے حراست میں لئے گئے کم عمر بچوں کی کل والدین اور ان کے ٹیچرس کی موجودگی میں کونسلنگ کی جائے گی ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT