Friday , September 22 2017
Home / شہر کی خبریں / کندھے پر بیوی کی نعش کیساتھ 80 کیلو میٹر کی مسافت

کندھے پر بیوی کی نعش کیساتھ 80 کیلو میٹر کی مسافت

جذام سے متاثرہ ضعیف شخص چلتے چلتے لڑکھڑا گیا، تلنگانہ میں عبرتناک واقعہ
حیدرآباد6نومبر(یواین آئی)اوڈیشہ میں مانجھی نامی ایک شخص کی جانب سے کاندھے پر اپنی بیوی کی لاش کو اٹھاکر لے جانے کا ملک بھر کو دہلادینے والے واقعہ سے مماثلت رکھنے والا واقعہ تلنگانہ میں پیش آیا ۔ رقم کا انتظام نہ ہوپانے پر جذام سے متاثر ایک ضعیف شخص اپنی بیوی کی لاش کو چھوٹی بنڈی پر تقریبا 80کیلو میٹر کی دوری تک لے گیا تاہم بالاخر وہ تھک کر سڑک پر گر گیا جس پر راہگیروں نے اس کی مدد کی اور ایک انسپکٹر نے آگے بڑھ کر ایمبولنس کا انتظام کیا اور راہگیروں نے اس کی بیوی کی آخری رسومات انجام دینے کے لیے رقم بھی اکٹھا کر کے اس کے حوالے کی۔اس شخص کی شناخت راملو کے طورپر کی گئی ہے جس کی بیوی کویتا دل کے عارضہ کاشکار تھی اور اسے اس کے ضلع وقار آباد سے علاج کے لیے سکندرآباد منتقل کیا گیا تھا جہاں اس کی علاج کے دوران موت ہوگئی۔ اس کی لاش اس کے آبائی ضلع پہنچانے کے لیے ایمبولنس والوں نے پانچ ہزار روپئے دینے کا مطالبہ کیا تاہم اس کے پاس رقم نہ ہونے پر وہ جمعہ کی شب حیدرآباد سے اپنی بیوی کی لاش بنڈی پر لے کر روانہ ہوااور ہفتہ کی صبح وقارآبادکے قریب اس بنڈی کو ڈھکیلتے ہوئے گر پڑا۔ اس نے چھوٹی بنڈی پر ہی اپنی بیوی کی لاش کو تقریبا 80کلو میٹر تک کا راستہ طے کیا۔یہ واقعہ تاخیر سے سامنے آیا۔

TOPPOPULARRECENT