Friday , September 22 2017
Home / کھیل کی خبریں / کنگس XI کا طاقتور گجرات لائینس سے آج مقابلہ

کنگس XI کا طاقتور گجرات لائینس سے آج مقابلہ

پنجاب کی ٹیم گزشتہ سال کی ناکامیوں سے باہر نکلنے کی خواہاں ، لیکن اہم کھلاڑیوں کا فقدان
موہالی۔ 10 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) آئی پی ایل کے گزشتہ مقابلوں میں اپنے انتہائی ناقص مظاہرہ کے سبب سب سے آخر مقام پر رہنے والی ٹیم کنگس الیون پنجاب کل یہاں ایک نئی ٹیم گجرات لائینس کے خلاف اپنے پہلے مقابلے میں بہتر مظاہرہ کے ذریعہ ماضی کے ریکارڈ سے باہر نکلنے کی کوشش کرے گی۔ کنگس الیون پنجاب نے اس سال اپنے لئے کس بڑے کھلاڑی کی خریدی نہیں کی ہے اور آسٹریلیائی جارج بائیلی کے بجائے جنوبی افریقی ڈیوڈ ملر اس کے نئے کپتان ہیں۔ بائیلی کو گزشتہ سال کے ناقص مظاہرہ کے بھی سبکدوش کردیا گیا تھا۔ ویریندر سہواگ بھی ریٹائرڈ ہوچکے ہیں لیکن اب اس ٹیم کے مربی کی حیثیت سے کام کررہی ہیں۔ پریتی زنٹا کی اس ٹیم میں توازن کی کمی رہی ہے کیونکہ اس میں فرحان بہاردین اور مارکوس اسٹوئنس جیسے آل راؤنڈرس، لڑکھڑاتی ہوئی سست رفتار گیند ڈالنے کے ماہر موہت شرما اور بائیں ہاتھ کے اسپنر سورپنیل سنگھ کے سواء کسی دوسرے اہم کھلاڑی کو شامل نہیں کیا جاسکا۔ آئی پی ایل کے گزشتہ سیزن کے دوران دیکھا گیا کہ کنگس الیون پنجاب کی ٹیم میں باہمی تعاون و ارتباط نہیں رہا۔ بیٹسمین نے کبھی بہتر مظاہرہ کیا تو بولرس اپنی ٹیم کی برتری برقرار رکھنے میں ناکام ثابت ہوئے۔

اس کے برخلاف نوزائدہ گجرات لائینس ایک متوازن ٹیم ہے جس میں بیٹنگ اور بولنگ کے ماہر کھلاڑی شامل ہیں جن میں برنڈن مک کلم، کپتان، سریش رائنا، آرون فنچ جیسے بیٹسمین کے علاوہ ڈیوائن برادو، رویندر جڈیجہ اور جیمس فالکنر جیسے کہنہ مشق آل راؤنڈرس قابل ذکر ہیں۔ ٹی۔ 20 کے یہ ماہرین حریف ٹیم کو بری طرح پریشان کرسکتے ہیں۔ فالکنر کے ساتھ براوو بھی ایک اعلیٰ معیاری اور ہلاکت خیز بولر بھی ہیں، لیکن پیس بولنگ کے شعبہ میں گجرات کی ٹیم نسبتاً کمزور معلوم ہوتی ہے کیونکہ اس کے پاس جنوبی آفریقہ کے ڈیل اسٹائین کے علاوہ اور کوئی دوسرا ہندوستانی یا بیرونی پیس بولر نہیں ہے۔ ڈیل اسٹائین ٹی۔20 کے حالیہ مقابلوں میں بہتر مظاہرہ کرنے میں ناکام رہے ہیں اور یہ دیکھتا ہے کہ آیا کل وہ اپنا بہتر فارم بناسکتے ہیں۔ گجرات لائینس میں اگرچہ قومی و بین الاقوامی کرکٹرس کی قابل لحاظ تعداد ہے لیکن پنجاب کے پاس صرف چار بیرونی کھلاڑی ہیں چنانچہ ملر، میکسویل، شان مارش، مرلی وجئے اور مچل جانسن پر اپنی ٹیم کی کامیابی کیلئے بھاری ذمہ داری عائد ہوگی۔

TOPPOPULARRECENT