Thursday , October 19 2017
Home / دنیا / کولمبیا کے مارکسسٹوں پر فضائی حملہ معطل

کولمبیا کے مارکسسٹوں پر فضائی حملہ معطل

صدر کولمبیا جوان مینویل کا فارک باغیوں پر فضائی حملے بند کردینے کا حکم
بوگوٹا۔26جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) صدر کولمبیا جوان مینویل سینٹوس نے حکم دیا ہے کہ مارکسسٹ سے تحریک حاصل کرنے والے ایف اے آر سی ( فارک) باغیوں پر حملے بند کردیئے جائیں ۔ اس طرح سے امن مذاکرات کو جاری رکھنے میں مدد ملے گی ۔ دو دن قبل حکومت کولمبیا اور فارک نے کئی ماہ کے جمود کے بعد بات چیت کی میز پر آنے کا فیصلہ کیا تھا اور میدان جنگ میں جنگ جاری تھی ۔ مذاکرات کا مقصد 50سال سے جاری خانہ جنگی کا خاتمہ ہے ۔ یہ لاطینی امریکہ کی قدیم ترین شورش ہے اور نومبر 2012ء سے اس میں شدت پیدا ہوگئی ہے ۔ صدر کولمبیا نے کہا کہ انہوں نے آج احکام جاری کئے ہیں کہ فارک کے ارکان کے کیمپوں پر حملے بند کردیئے جائیں ۔ وہ شمالی شہر کارٹاجینا میں بحریہ کی ایک تقریب سے خطاب کررہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ خانہ جنگی کی شدت میں کمی کی جائے ۔ اس کا مطلب کم تعداد میں اموات ‘ کم مقدار میں درد اور کم تعداد میں متاثرین ہوگا ۔انہوں نے اشارہ دیا کہ وہ ایک طویل عرصہ سے شہری علاقوں کو لاحق خطرے پر غور کررہے تھے ۔ صدر کولمبیا نے اسی طرح مارچ میں بمباری کی مہم بھی معطل کردی تھی اور ایک ماہ بعد نیم فوجی جنگجوؤں کے ہاتھوں 11فوجیوں کی ہلاکت کے بعد بم حملوں کا دوبارہ آغاز ہوا تھا ۔انقلابی مسلح افواج برائے کولمبیا ( ایف اے آر سی ) یکطرفہ طور پر ایک ماہ سے جنگ بندی کی پابندی کررہی تھی ۔ صدر کولمبیا نے ابتداء میں جوابی خیرسگالی سے انکار کردیا تھا ۔ تازہ ترین کوششیں کمزور امن مذاکرات کو دوبارہ تقویت دینا ہے ۔ جب کہ ایک بار پھر موسم خزاں شورش پسندی میںشدت پیدا ہوگئی اور بیسیوں افراد جن کا تعلق دونوں طرف سے ہے ہلاک ہوگئے اور امن مذاکرات کا مستقبل کولمبیا کے کئی شہریوں کو خطرہ میں نظر آنے لگا ۔

TOPPOPULARRECENT