Friday , June 23 2017
Home / ہندوستان / کولکتہ کے شاہی امام کے خلاف پولیس میں شکایت

کولکتہ کے شاہی امام کے خلاف پولیس میں شکایت

کولکتہ ۔ 12 مئی (سیاست ڈاٹ کام) کولکتہ کی ٹیپوسلطان مسجد کے شاہی امام نورالرحمن برکاتی کے خلاف پولیس میں ایک شکایت درج کروائی گئی ہے جنہوں نے اپنی گاڑی سے لال بتی ہٹانے سے انکار کرتے ہوئے مرکز کے حکم امتناع کی خلاف ورزی کی ہے۔ پولیس کے مطابق ایک شخص سورج نے ٹوپیا پولیس اسٹیشن میں یہ شکایت دائر کی ہے۔ برکاتی نے گذشتہ روز کہا تھا کہ وہ ایک مذہبی رہنما ہیں اور لال بتی کار استعمال کرنا ان کا حق ہے۔ انہوں نے گذشتہ روز پی ٹی آئی سے کہا تھا کہ ’’میں ایک مذہبی لیڈر ہوں اور کئی دہائیوں سے اپنی سرکاری کار پر لل بتی استعمال کرتا رہا ہوں۔ میں مرکز کے احکام کی پابندی نہیں کرتا۔ مجھے حکم دینے والے وہ آخر ہوتے کون ہیں؟‘‘۔ امام کی جانب سے مرکز کے احکام کی خلاف ورزی پر بی جے پی کی بنگال یونٹ نے سخت مذمت کی ہے۔ بی جے پی کے ریاستی سکریٹری لوکٹ چٹرجی نے کہا کہ ’’انہوں نے (برکاتی) نے مرکز کے احکام کی خلاف ورزی کرنے کیلئے جسارت کہاں سے لائی۔

 

ٹرین میں غذا کی فراہمی نہیں ہورہی
راجدھانی کے مسافرین کی شکایت
رانچی ، 12 مئی (سیاست ڈاٹ کام) نئی دہلی ۔ رانچی راجدھانی اکسپریس سے 10 مئی کے سفر والے مسافرین نے یہاں ریلوے عہدیداروں سے شکایت کی ہے کہ انھیں سفر کے دوران ٹرین میں کھانا فراہم نہیں کیا گیا۔ ریلوے عہدیداروں نے آج کہا کہ رانچی ریلوے ڈیویژن نے 10 مئی والی 12454 نئی دہلی ۔ رانچی راجدھانی اکسپریس میں غذا کی فراہمی میں تاخیر پر مسافرین کی بے اطمینانی کا سنجیدگی سے نوٹ لیا ہے۔ ریلوے نے بتایا کہ گزشتہ روز جب ٹرین رانچی اسٹیشن پہنچی تب سینئر ڈیویژنل کمرشیل منیجر نیرج کمار اپنی ٹیم کے ہمراہ اسٹیشن پر موجود تھے۔ انھوں نے مسافرین سے بات کی جنھوں نے شکایت کی کہ انھیں کھانا نہیں ملا کیونکہ غذا کی سربراہی کیلئے کوئی کیٹرنگ اسٹاف موجود نہیں تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT