Thursday , September 21 2017
Home / کھیل کی خبریں / کوہلی زیرقیادت آر سی بی، رائنا کے گجرات لائنز کو آج فائنل میں رسائی کا موقع

کوہلی زیرقیادت آر سی بی، رائنا کے گجرات لائنز کو آج فائنل میں رسائی کا موقع

بنگلورو ، 23 مئی (سیاست ڈاٹ کام) متواتر شاندار رِدھم کے ساتھ کھیلنے والے ویراٹ کوہلی کی پُرجوش قیادت کے بل بوتے پر رائل چیلنجرز بنگلور (آر سی بی) کی بھرپور کوشش رہے گی کہ اولین انڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل) ٹائٹل سے قریب تر ہوجائیں، جب وہ ٹیبل ٹاپرز گجرات لائنز (جی ایل) کا کوالیفائر I میں کل یہاں مقابلہ کریں گے۔ آر سی بی ٹیم ایک مرحلے پر واقعی پریشانی میں مبتلا ہوگئی تھی کیونکہ انھیں ناک آؤٹ (پلے آف) مرحلے تک رسائی کیلئے اپنے آخری چار مقابلے جیتنے ضروری تھے۔ بنگلور ٹیم نے زبردست فائٹنگ اسپرٹ کا مظاہرہ کیا جس میں کوہلی پیش پیش رہے، اور ٹیم نے لیگ مرحلے میں لگاتار چار کامیابیوں کے ساتھ دوسری پوزیشن پر اختتام کیا۔ آر سی بی والے پریلمنری راؤنڈ کا اختتام 14 مقابلوں میں 16 پوائنٹس کے ساتھ کرتے ہوئے ٹیبل ٹاپرز گجرات لائنز کے ٹھیک پیچھے رہے، جنھوں نے 14 میچوں سے 18 پوائنٹس جٹائے۔ آر سی بی نے یوں لگا کہ سیزن کی غیرمتاثرکن شروعات کے بعد ٹھیک وقت پر ردھم حاصل کیا۔ کوہلی زیرقیادت ٹیم نے چار عمدہ مظاہروں میں گجرات لائنز کو 144 رنز سے شکست فاش دی، کولکاتا نائٹ رائیڈرز کو 9 وکٹوں سے ہرایا، کنگز الیون پنجاب کو 82 رنز (D/L سسٹم) اور آخر میں دہلی ڈیرڈیولز کو 6 وکٹوں سے ہرا کر ٹاپ 4 میں جگہ حاصل کرلی۔ گزشتہ شب دہلی ٹیم کے خلاف ’کرو یا مرو‘ کی صورتحال والے میچ میں آر سی بی نے اپنے حریفوں کو 138/8 تک محدود رکھا اور پھر ٹارگٹ کا تعاقب بڑی آسانی سے کیا۔ کوہلی نے پھر ایک بار 54 ناٹ آؤٹ کے ساتھ واہ واہ لوٹی۔ آر سی بی والے یہی چاہیں گے کہ اپنا ردھم مزید دو مقابلوں تک ضرور جاری رکھیں اور یقینی بنالیں کہ وہ 2009ء اور 2011ء کے سیزن والے اپنے مظاہرے (رنرزاپ) سے بہتر کارکردگی درج کرائیں۔

آر سی بی کے گجرات کے خلاف گزشتہ مقابلہ میں جو یہیں کھیلا گیا تھا، انھوں نے آئی پی ایل کی تاریخ میں عظیم ترین جیت (144 رنز) درج کرائی تھی۔ اے بی ڈی ولیرز (129 ناٹ آؤٹ) اور ویراٹ کوہلی (109) نے اُس میچ میں بولنگ اٹیک کی دھجیاں اُڑاتے ہوئے شاندار سنچریاں اسکور کئے تھے۔ آنے والے کل بنگلور کی ٹیم ہوم گراؤنڈ پر دوبارہ عمدہ کامیابی حاصل کرنا چاہے گی۔ آر سی بی کیلئے رواں سیزن کے سب سے بڑے ہیرو کپتان کوہلی ثابت ہوئے ہیں، جو شاید اپنے بیٹنگ کریئر کے بہترین مرحلے سے گزر رہے ہیں۔ کوہلی نے ابھی تک جاریہ آئی پی ایل میں ریکارڈ 919 رنز جٹائے ، جن میں چار سنچریاں اور چھ ففٹیاں بہ اوسط 91.90 درج ہوئی ہیں۔ دوسری طرف آئی پی ایل میں پہلی بار کھیلنے والے گجرات لائنز نے ٹائٹل ہولڈرز ممبئی انڈینس کی امیدوں کو چکناچور کرتے ہوئے پلے آف مرحلے کیلئے کوالیفائی ہونے والی اولین ٹیم کا اعزاز حاصل کیا۔ گجرات نے اِس سیزن اپنے اوپننگ میچ میں آر سی بی کو چھ وکٹ سے شکست دی لیکن بعد والے مقابلے میں 144 رنز کی بدترین ناکامی سے دوچار ہوئی۔ سریش رائنا زیرقیادت ٹیم اس ذلت آمیز شکست کا بدلہ لینا چاہے گی، جس پر انھیں اپنے اولین آئی پی ایل سیزن کے فائنل میں جگہ مل جائے گی۔ آر سی بی کے برعکس گجرات نے سیزن کی شروعات بڑی شاندار کی اور بعد میں کچھ انحطاط سے دوچار ہوئے۔ آرن فنچ (11 میچز میں 339 رنز)، برنڈن مک کلم (14 میں 321)، ڈوین اسمتھ (10 میں 250)، رائنا (13 میں 397)، دنیش کارتک (283) اور ڈارن براوو کی شکل میں گجرات بھی بہت طاقتور بیٹنگ لائن اپ رکھتی ہے۔ بولنگ کے شعبے میں گجرات نے براوو اور دھول کلکرنی کی پیس جوڑی پر انحصار کیا ہے۔ جہاں براوو نے اپنے نام کے ساتھ 15 وکٹیں درج کرائے، وہیں کلکرنی ابھی تک 14 وکٹیں حاصل کررکھے ہیں۔ اسپنرز رویندر جڈیجا اور پراوین تامبے نے ابھی تک رواں سیزن کچھ خاص مظاہرہ پیش نہیں کیا، اور اُن سے بھی کچھ بہتر کارکردگی کی توقع رہے گی۔
٭   اگرچہ منگل 24 مئی کو ناکام ہونے والی ٹیم کو فائنل کیلئے کوالیفائی کرنے کا ایک اور موقع ملے گا، مگر آر سی بی اور گجرات دونوں ہی چاہیں گے کہ اتوار 29 مئی کے فائنل بمقام بنگلورو میں راست رسائی حاصل کرلی جائے۔ چہارشنبہ 25 مئی کو دہلی میں سن رائزرز حیدرآباد اور کولکاتا نائٹ رائیڈرز کے درمیان ’ایلمنیٹر‘ مقرر ہے، جس کی فاتح ٹیم اور منگل کے میچ کی ناکام ٹیم کے درمیان ’کوالیفائر 2‘ بھی دہلی میں جمعہ 27 مئی کو کھیلا جائے گا۔       (میچ رات 8:00 بجے شروع ہوگا)

TOPPOPULARRECENT