Tuesday , October 17 2017
Home / کھیل کی خبریں / کوہلی کو کپتان اور دھونی کو وکٹ کیپر بنانے پر زور

کوہلی کو کپتان اور دھونی کو وکٹ کیپر بنانے پر زور

دھونی کی قائدانہ صلاحیتیں معدوم ، محدود اوورس کیلئے وکٹ کیپر ہی بہتر : پرسنا
نئی دہلی ۔ /23 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) ماہر اسپنر ایراپلی پرسنا نے اپنے اس احساس کااظہار کیا ہے کہ اب ویراٹ کوہلی کو کرکٹ کے تمام تین فورمیٹس کا کپتان بنانے کا وقت آگیا ہے اور دھونی کی قائدانہ صلاحیتیں تیزی سے ماند پڑتی جارہی ہیں چنانچہ انہیں اب محدود اوور کے فورمیٹ میں محض وکٹ کیپر کی حیثیت سے برقرار کھا جائے ۔ مارچ ۔ اپریل میں ہونے والے عالمی ٹی ۔ 20 کیلئے میں ہندوستانی ٹیم کی قیادت کیلئے اگرچہ دھونی کے نام کا اعلان کیا جاچکا ہے لیکن پرسنا چاہتے ہیں کہ اس فیصلے پر نظر ثانی کی جائے ‘‘ کیونکہ ونڈے انٹرنیشنل کی گزشتہ تین سیریز میں دھونی کے زیرقیادت ہندوستانی ٹیم کو شکست ہوچکی ہے ۔ پرسنا نے پی ٹی آئی سے کہا کہ ’’میرے خیال میں اب وقت آگیا ہے کہ کوہلی کو تمام تین فورمیٹس کا کپتان بنادیا جائے ۔ دھونی اب 34-33 سال کے ہوچکے ہیں ۔ کسی مرحلہ پر کپتان میں تبدیلی ہونی ہی ہے تو پھر یہ اب ہی کیوں نہ کی جائے ؟انہیں (دھونی کو) ایک کھلاڑی کے طو پر کھیل میں برقرار رکھا جاسکتا ہے ۔ لہذا یہ قطعی طور پر دھونی پر منحصر ہے کہ وہ فیصلہ کریں ۔ اگر آپ مجھ سے پوچھیں تو میں کہوں گا کہ وہ (دھونی بحیثیت وکٹ کیپر) وکٹ لیتے رہیں اور کوہلی کو فی الفور قیادت کی ذمہ داری دی جائے ۔ یہ ٹیم کے مفاد میں ہوگا ‘‘۔

TOPPOPULARRECENT