Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / کیاش لیس دوڑ میں تلگو ریاستیں آگے

کیاش لیس دوڑ میں تلگو ریاستیں آگے

گجرات کا فی پیچھے ۔ چندرا بابو کمیٹی کے سربراہ
حیدرآباد ۔ 6 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : سماج کو نقدی لین دین سے پاک بنانے میں تلنگانہ اور آندھرا پردیش کے درمیان دلچسپ مسابقت دیکھی جارہی ہے ۔ سارے ملک میں 30 نومبر تک آندھرا پردیش سرفہرست تھا ۔ یکم دسمبر سے ریاست تلنگانہ سرفہرست ہوچکا ہے ۔ جب کہ وزیراعظم کا ریاست گجرات اس معاملے میں تلگو ریاستوں سے کافی پیچھے ہے ۔ بڑی کرنسی کی منسوخی کے بعد سارے ملک میں ای بینکنگ کی سرگرمیاں تیز ہوگئی ہے اور ہر ریاست ایک دوسرے پر سبقت لیجانے میں مصروف ہیں تاہم سماج کو نقدی لین دین سے پاک بنانے میں اصل اور دلچسپ مقابلہ تلنگانہ اور آندھرا پردیش میں جاری ہے اور دونوں تلگو ریاستیں ایک دوسرے کو مات دینے اور سرفہرست مقام حاصل کرنے میں جٹ گئے ہیں ۔ واضح رہے کہ وزیراعظم نریندر مودی نے ملک کو کیاش لیس منی میں تبدیل کرنے کے لیے چیف منسٹر آندھرا پردیش این چندرا بابو نائیڈو کی قیادت میں 13 رکنی کمیٹی تشکیل دی ہے ۔ اس کمیٹی میں چیف منسٹر تلنگانہ کو شامل نہیں کیا گیا ہے جب کہ کے سی آر ملک کے پہلے چیف منسٹر ہیں جنہوں نے نوٹ بندی کی نہ صرف کھل کر تائید کی ہے بلکہ دہلی پہونچکر وزیراعظم نریندر مودی سے ملاقات کرتے ہوئے انہیں مبارکباد دی ہے اور تحریری طور پر چند تجاویز پیش کی ہے ۔ بڑی ذمہ داری اپنے کندھوں پر آجانے کے بعد چندرا بابو نائیڈو نے سارے ملک میں آندھرا پردیش کو رول ماڈل بنانے کی شروعات کا آغاز کیا ۔ یکم جنوری 2016 سے 5 دسمبر تک آندھرا پردیش میں 99,62,82,008 نقد رقمی سے پاک لین دین ہوئی ہے ۔ جب کہ تلنگانہ میں 73,64,54,479 نقد رقمی سے پاک لین دین ہوئی ہے ۔ ان اعداد و شمار کے لحاظ سے ملک میں آندھرا پردیش کو سرفہرست مقام حاصل ہوا تھا ۔ تاہم صرف 5 دن میں ریاست تلنگانہ نے یکم تا 5 دسمبر تک حیرت انگیز چونکا دینے والا مظاہرہ کرتے ہوئے آندھرا پردیش کو کافی پیچھے چھوڑ دیا ہے ۔ صرف ایک ہی دن یکم دسمبر کو ریاست تلنگانہ میں 17 لاکھ نقد رقمی سے پاک لین دین ہوئی ہے ۔ جب کہ آندھرا پردیش میں 7 لاکھ ہی ہوپائی تھی ۔ یکم تا 5 دسمبر تک تلنگانہ میں 82  لاکھ نقد رقمی سے پاک لین دین ہوئی تو آندھرا پردیش میں صرف 32 لاکھ نقد رقمی پاک سے لین دین ہوئی ہے ۔ صرف 5 دن میں تلنگانہ نے بہت بڑی چھلانگ لگائی ہے ۔ ملک کے دوسرے ریاستوں گجرات ، کیرالا ، اترپردیش ، مہاراشٹرا ، ٹاملناڈو اس معاملے میں کافی پیچھے ہیں پھر بھی کسی قدر کیرالا دونوں تلگو ریاستوں کے ساتھ مسابقت کی دوڑ میں شامل ہیں ۔ وزیراعظم کا آبائی ریاست گجرات نقد رقمی سے پاک لین دین کے معاملے میں تلگو ریاستوں سے کافی پیچھے ہیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT