Monday , October 23 2017
Home / شہر کی خبریں / کیا پرانے شہر میں میٹرو ریل پراجیکٹ کا کام شروع ہوگا؟

کیا پرانے شہر میں میٹرو ریل پراجیکٹ کا کام شروع ہوگا؟

حکومت نے تاحال کوئی فیصلہ نہیں کیا ۔ راہداری میں تبدیلی کے بھی اندیشے

حیدرآباد۔ 5 مئی (سیاست نیوز) پرانے شہر میں میٹرو ریل کے متعلق حکومت نے تاحال کوئی فیصلہ نہیں کیا ہے، اسی لئے ایل اینڈ ٹی کمپنی نے تعمیری سرگرمیوں کا آغاز نہیں کیا گیا ہے۔ بتایا جاتا ہیکہ حکومت نے پرانے شہر میں میٹرو ریل کے آغاز پر اب تک کوئی فیصلہ نہیں کیا جس کے سبب حیدرآباد میٹرو ریل کا دوسرا مرحلہ متاثر ہونے کا اندیشہ ہے۔ فیصلہ میں حکومت کے ٹال مٹول سے پرانے شہر کی ترقی متاثر ہونے کے خدشات کے پیش نظر ایل اینڈ ٹی کی جانب سے پرانے شہر کی میٹرو راہداری کے ماسوا دیگر راہداریوں پر تیز رفتار تعمیری سرگرمیاں جاری ہیں ۔ حیدرآباد میٹرو ریل کا آئندہ ماہ کے اوائل میں آغاز متوقع تھا لیکن اس میں ایک مرتبہ پھر التوا کا اندیشہ پیدا ہوچکا ہے جس کی بنیادی وجہ مختلف محکمہ جات سے سرٹیفکیٹس کا حصول ہے۔ حیدرآباد میں شروع کئے گئے اس عظیم الشان عوامی شراکت داری والے پراجیکٹ کی تکمیل سے شہر کے عوام کو آمد و رفت حاصل ہونے کی توقع ہے، لیکن پرانے شہر میں میٹرو ریل پراجکٹ کے متعلق حکومت کی سردمہری سے ایسا محسوس ہوتا ہے کہ حکومت خود اس پراجکٹ کو پرانے شہر میں شروع کرنے میں قطعی سنجیدہ نہیں ہے یا پھر سیاسی دباؤ کے تحت پراجکٹ کے آغاز کا فیصلہ نہیں کرپارہی ہے۔ باوثوق ذرائع کی اطلاع کے بموجب حیدرآباد میٹرو ریل کو پرانے شہر کی راہداری میں تبدیلی کے متعلق کوئی ہدایت جاری نہیں کی گئی ہے بلکہ حکومت کی جانب سے یہ واضح کیا گیا ہے کہ حیدرآباد میٹرو ریل پراجکٹ کی کسی بھی راہداری میں کوئی تبدیلی نہیں کی جائے گی۔ تلنگانہ کی تشکیل سے قبل ٹی آر ایس نے حیدرآباد میٹرو ریل کی سلطان بازار اور اسمبلی کی راہداریوں کی تبدیلیوں کا مطالبہ کرکے احتجاج کیا اور یہ کہا جاتا رہا کہ اقتدار حاصل ہونے کی صورت میں ٹی آر ایس ، سلطان بازار و اسمبلی کے سامنے سے میٹرو ٹرین کی راہداریوں کو تبدیل کریگی لیکن اقتدار ملنے کے بعد ٹی آر ایس نے سلطان بازار کے تاجرین سے مذاکرات کے ذریعہ مسئلہ کو حل کرکے راہداری میں تبدیلی سے اجتناب کیا۔ اسی طرح یہ کہا جارہا ہے کہ پرانے شہر کی راہداری میں تبدیلی نہیں لائی جائیگی لیکن اب تک اس سلسلے میں کوئی فیصلہ نہ ہونے سے میٹرو ریل کے علاوہ ایل اینڈ ٹی کمپنی کے حکام خدشات کا شکار ہیں کہ آیا پرانے شہر کا آغاز ہوگا یا راہداری میں تبدیلی کا فیصلہ کیا جائے گا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT