Friday , August 18 2017
Home / Top Stories / کیرالا میں پنارائی وجیئن کی بحیثیت چیف منسٹر حلف برداری

کیرالا میں پنارائی وجیئن کی بحیثیت چیف منسٹر حلف برداری

ایل ڈی ایف کے 19 وزراء میں اے سی محی الدین اور کے ٹی جلیل بھی شامل ، بشمول دو خواتین 13 نئے چہرے

تھرواننتاپورم ۔ 25 مئی (سیاست ڈاٹ  کام) کیرالا میں سی پی آئی (ایم) کی طاقتور شخصیت پینارائی وجیئن نے آج ریاستی چیف منسٹر کی حیثیت سے حلف لیا۔ وجیئن کی جماعت سی پی آئی (ایم) کی زیرقیادت بائیں بازو جمہوری محاذ (ایل ڈی ایف) کی 19 رکنی وزارت میں بشمول دو خواتین 13 نئے چہرے ہیں۔ چیف منسٹر کے عہدہ کیلئے ایل ڈی ایف میں جاری مسابقت میں اپنے قریبی حریف 92 سالہ ایس اچھوتانندن کو پیچھے چھوڑ دینے والے 72 سالہ وجیئن کو گورنر جسٹس (ریٹائرڈ) پی ستھاسیوم نے سنٹرل اسٹیڈیم میں عہدہ اور رازداری کا حلف دلایا۔ تاڑی تاسنے والے ایک غریب خاندان سے تعلق رکھنے والے وجیئن پنارائی پہلی مرتبہ چیف منسٹر کے عہدہ پر فائز ہوئے ہیں۔ انہوں نے ملیالم میں حلف لیا۔ سی پی آئی (ایم) پولٹ بیورو کے رکن وجیئن اپنی ریاست کے 12 ویں چیف منسٹر ہیں۔ 19 رکنی کابینہ میں بشمول چیف منسٹر 12 کا تعلق سی پی آئی (ایم) سے ہے۔ 4 کا تعلق سی پی آئی سے ہے۔ این سی پی، جنتادل (ایس) اور کانگریس ایس کا ایک ایک رکن بھی کابینہ میں شامل کیا گیا ہے۔ کابینہ میں بشمول دو خواتین، 13 نئے چہرے ہیں۔ دیگر پانچ وزراء سابق ایل ڈی ایف حکومت میں بھی وزیر تھے۔ کیرالا میں 16 مئی کو منعقدہ اسمبلی انتخابات میں سی پی آئی (ایم) کی زیرقیادت ایل ڈی ایف نے 140 رکنی ایوان کی 91 نشستوں پر کامیابی حاصل کرتے ہوئے کانگریس کی زیرقیادت یو ڈی ایف کو اقتدار سے بیدخل کیا تھا۔ ریاستی سکریٹریٹ سے متصلہ اسٹیڈیم میں ایک بڑا پنڈال نصب کیا گیا تھا جس میں کم سے کم 30,000 افراد کے بیٹھنے کی گنجائش تھی۔ عوام کی کثیر تعداد کو تقریب دیکھنے میں سہولت کیلئے مختلف مقامات پر سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے گئے تھے۔ حلف برداری تقریب سے قبل ہلکی بارش، بائیں بازو کے ان کارکنوں کے جوش و خروش کو ٹھنڈا کرنے میں ناکام ہوگئی جو ریاست کے مختلف مقامات بالخصوص شمالی اضلاع کسرگوڈ، کنور اور کوزیکوڈ سے بسوں اور دیگر گاڑیوں کے ذریعہ اس تقریب میں شرکت کیلئے پہنچے تھے۔ 2006 میں اس وقت کے چیف منسٹر کی حیثیت سے وی ایس اچھوتانندن اور ان کے کابینی رفقاء نے راج بھون کے باہر وسیع و عریض میدان پر حلف لیا تھا۔ سابق وزیراعظم ایچ ڈی دیوے گوڑا، سابق چیف منسٹرس اومن چنڈی اور وی ایس اچھوتانندن، سی پی آئی (ایم) کے جنرل سکریٹری سیتارام یچوری، پرکاش کرت، 97 سالہ کے آر گوری اماں، سابق مرکزی وزیر اور کیرالا کی نئی اسمبلی میں بی جے پی کے واحد رکن او راجگوپال، مذہبی و سماجی قائدین، فلمی اداکاروں اور دیگر اہم شخصیات نے اس تقریب میں شرکت کی۔ سی پی آئی (ایم) اور سی پی آئی کے ارکان نے ’’عہد واثق‘‘ پر حلف لیا۔ تاہم فرنٹ کے دیگر ارکان نے خدا کے نام پر حلف لیا۔ نئے وزراء میں تھامس آئزرک، اے کے بالن، جی سدھاکرن، ای پی جیارنجن، کڈاکم پلی سریندرن، کے کے شائیلجہ، جے مری کئی اماں، ٹی پی راما کرشنن، اے سی محی الدین، سی رویندر ناتھ اور کے ٹی جلیل کے علاوہ ایس رامچندرن، اے کے سریدھرن، میتھیو تھامس شامل ہیں۔ حلف برداری کے موقع پر جگہ جگہ سی پی آئی (ایم) کے سرخ پرچموں کے لہرائے جانے کے سبب دارالحکومت تھرواننتاپورم سرخ سمندر نظر آرہا تھا۔ سرخ شرٹس میں ملبوس کمیونسٹ کارکن سروں پر سرخ ٹوپی پہنے ہوئے تھے۔

TOPPOPULARRECENT