Tuesday , September 26 2017
Home / کھیل کی خبریں / کینز نے اسپاٹ فکسنگ کی پیشکش کی: مکالم

کینز نے اسپاٹ فکسنگ کی پیشکش کی: مکالم

لندن۔16 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام ) نیوزی لینڈ کے وکٹ کیپر  اور  کپتان برینڈن مکالم نے کہا ہے کہ سابق آل راؤنڈر کرس کینز نے انہیں اسپاٹ فکسنگ کی پیشکش کی تھی۔انہوں نے لندن کی ایک عدالت کو مطلع کیا ہے کہ کینز نے انہیں پہلی مرتبہ اسپاٹ فکسنگ کی پیشکش کولکتہ کے ایک ہوٹل میں اپریل 2008 میں کی تھی۔ انہوں نے عدالت سے کہا کہ کینز نے انہیں کہا کہ دیگر کھلاڑی اس میں ملوث ہونے سے خوفزدہ ہیں اور وہ ایک مرتبہ اسپاٹ فکسنگ کرکے 70 ہزار ڈالرس سے دو لاکھ ڈالرس کے درمیان پیسہ کما سکتے ہیں۔ مکالم نے کہا کہ وہ کینز کی اس پیشکش سے حیران رہ گئے تھے جبکہ کینز نے اس کے بعد بھی دو مرتبہ انہیں اسپاٹ فکسنگ کی پیشکش کی۔مکالم اس وقت  آسٹریلیائی سابق کپتان کے ساتھ آئی پی ایل فرنچائز کولکتہ نائٹ رائیڈز کی نمائندگی کررہے تھے۔مکالم نے ساؤتھ وارک کراؤن کورٹ سے کہا کہ کینز نے انہیں اسپاٹ فکسنگ کے پورے طریقہ کار کے حوالے سے آگاہ کیا اور کہا کہ کس طرح کھیل کے کسی مخصوص حصے پر اثر انداز ہوا جاسکتا ہے۔ جب پراسیکیوٹر نے ان سے پوچھا کہ کیا کہ طریقے قانونی تھے تو مکالم نے کہا کہ نہیں یہ کھیل کو ایماندارانہ انداز میں کھیلنے کے طریقے نہیں تھے۔انہوں نے کہا کہ پہلے میں سمجھا کہ کینز مجھ سے مذاق کررہے ہیں تاہم مجھے جلد سمجھ آگیا کہ یہ کوئی مذاق نہیں تھا۔انہوں نے کہا کہ کھیل کے بڑے بڑے نام اس میں ملوث ہیں جبکہ کینز چاہتے تھے کہ میں بھی اس میں ملوث ہوجاؤں۔ مکالم  نے کہا کہ کینز نے انہیں بتایا کہ وہ اس طرح کی پیشکش ڈینیل ویٹوری اور جیکب اورم کو بھی کرچکے ہیں تاہم ‘ان میں اسے کرنے کا دم نہیں۔

TOPPOPULARRECENT