Monday , October 23 2017
Home / شہر کی خبریں / کے بی آر پارک کی موجودہ حالت کی برقراری کا مطالبہ

کے بی آر پارک کی موجودہ حالت کی برقراری کا مطالبہ

فلائی اوور کی تعمیر سے پارک کو نقصان نہ ہو، ماہرین کے تاثرات

حیدرآباد ۔ 22 مئی (سیاست نیوز) کے بی آر نیشنل پارک حیدرآباد میں موجود سینکڑوں درختوں کو ایس آر ڈی پی فلائی اوور کی تعمیر کے کام پر گرادیئے جانے پر شہر کے پلانرس، ماہرین ماحولیات، ماہرین آثار قدیمہ و دیگر شخصیتوں نے شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ انہوں نے درختوں کو اس طرح زمین دوز کردیئے جانے کیلئے سیاستداں اور کنٹراکٹرس کے درمیان ملی بھگت قرار دیتے ہوئے کے بی آر پارک کی حفاظت اور اس کی موجودہ حالت کی برقراری کا مطالبہ کیا۔ یہاں ٹائمس آف انڈیا کے زیراہتمام حیدرآباد کے سرسبزوشاداب مقامات کی حفاظت کے عنوان پر ایک پیانل مباحثہ کا اہتمام عمل میں لایا گیا۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے پروفیسر پروشوتھم ریڈی ماہر ماحولیات نے حکومت تلنگانہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ عوامی رائے تجاویز بغیر ریاستی حکومت من مانی اقدامات کررہی ہے جبکہ غیر ضروری طور پر ہاسپٹلس کی منتقلی عمل میں لائی جارہی ہے۔ انہوں نے بی آر پارک میں درختوں کی کٹائی پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے اس کو سیاستدانوں اور کنٹراکٹرس کی ملی بھگت قرار دیا۔ انہوں نے حیدرآبادی عوام کی جانب سے اس پر ردعمل کی ستائش، سی رامچندریا  نے استفسار کیا کہ آیا ہر کسی نے ایس آر ڈی پی فلائی اوور کی سفارش کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ کے بی آر، چارمینار، قلعہ گولکنڈہ، حیدرآباد کی شناخت ہیں۔ یہ جی وی کے ان فلائی اوورس کی طرح نہیں ہیں انہوں نے کے بی آر واقعہ پر اظہارتاسف کیا۔ ایس سیوا کورمرن حیدرآباد نے کے بی آر پارک کو ایک حیاتیاتی اثاثہ قرار دیا۔ انہوں نے کے بی آر پارک کی موجودہ حالت کی برقراری کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ کے بی آر پارک کی تمام تر حفاظت کرنی چاہئے۔ سجاد شاہد انٹاچ نے اپنے خطاب میں کہا ایم ویشوریا نے حیدرآباد کیلئے چھ فیصد پارکوں کی تجویز رکھی تھی تاہم اب یہاں صرف 1.83 فیصد پارکس ہیں۔ ایم ششی دھر ریڈی سابق صدرنشین این ڈی آر ایم نے کہا کہ یہ بدبختی کی بات ہے عوامی ووٹوں سے منتخب ہونے والے افراد عوامی مسائل کو نظرانداز کرتے ہیں۔ مسائل پر اوپن پالونولوجسٹ اپولو ہاسپٹل کرون گوپال، منی شنکر فلمساز نے بھی خطاب کیا۔ قبل ازیں ایڈیٹر ٹائمز آف انڈیا حیدرآباد گنگ شک ناگ نے ’’حیدرآباد کو سانس لینے دیجئے‘‘ کے موضوع پر ایک پینل لسٹ کو متعارف کیا۔

TOPPOPULARRECENT