Thursday , September 21 2017
Home / شہر کی خبریں / کے جانا ریڈی چیف منسٹر کے سی آر کے مخبر

کے جانا ریڈی چیف منسٹر کے سی آر کے مخبر

وجہ نمائی نوٹس جاری کرنے کانگریس پر زور ، پی گوردھن ریڈی
حیدرآباد ۔ 8 ۔ جون : ( سیاست نیوز ) : کانگریس پارٹی میں ڈسپلن شکنی کا سلسلہ جاری ہے ۔ تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کی ہدایت کو نظر انداز کرتے ہوئے کانگریس کے سینئیر قائد و رکن راجیہ سبھا مسٹر پی گوردھن ریڈی نے قائد اپوزیشن مسٹر کے جانا ریڈی کو چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر کا مخبر قرار دیتے ہوئے انہیں وجہ نمائی نوٹس جاری کرنے کا کانگریس ہائی کمان سے مطالبہ کیا ہے ۔ واضح رہے کہ تین دن قبل صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کیپٹن اتم کمار ریڈی سابق صدر پنالہ لکشمیا اور سینئیر رکن پارلیمنٹ نندی ایلیا کے خلاف ریمارکس کرنے والے پارٹی کے سینئیر رکن اسمبلی سابق وزیر مسٹر کومٹ ریڈی وینکٹ ریڈی کو وجہ نمائی نوٹس جاری کی گئی تھی اور پارٹی کے تمام قائدین کو ایک دوسرے کے خلاف بیان بازی کرنے کے خلاف سخت انتباہ دیا گیا تھا ۔ تاہم آج گاندھی بھون میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر پی گوردھن ریڈی نے اپوزیشن کا تعمیری رول ادا کرنے کے بجائے راست و بلواسطہ طور پر چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر کی تائید کرنے کا قائد اپوزیشن مسٹر کے جانا ریڈی پر الزام عائد کیا ۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس ہائی کمان جانا ریڈی کی کارکردگی کا سخت نوٹ لیتے ہوئے ان کی سرگرمیوں پر نظر رکھی ہوئی ہے ۔ جانا ریڈی کی جانب سے مناسب انداز میں کام نہ کرنے کی وجہ سے ریاست تلنگانہ کانگریس پارٹی کو بہت بڑا نقصان پہونچ رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس سے قریبی تعلقات بنائے رکھنے والے قائدین کی کانگریس پارٹی نشاندہی کرچکی ہے ۔ کومٹ ریڈی بردارس کافی دنوں سے ٹی آر ایس میں شمولیت اختیار کرنے کی کوشش کررہے ہیں شمولیت کی تاریخ کئی مرتبہ ملتوی ہوئی ہے ۔ دونوں بھائیوں نے آبپاشی پراجکٹس کے کنٹراکٹس حاصل کرنے کے لیے ریاستی وزیر آبپاشی مسٹر ہریش راؤ سے خفیہ سازباز کرچکے ہیں ۔ مسٹر پی گوردھن ریڈی نے حلقہ لوک سبھا نلگنڈہ کی نمائندگی کرنے والے کانگریس کے رکن پارلیمنٹ مسٹر جی سیکھندر ریڈی اور مریال گوڑہ اسمبلی حلقہ کی نمائندگی کرنے کانگریس کے رکن اسمبلی بھاسکر راؤ کی ٹی آر ایس میں شمولیت سے متعلق افواہوں پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ان قائدین کے کانگریس چھوڑنے سے کانگریس کو نقصان نہیں فائدہ ہوگا ۔ کانگریس میں دوسرے درجے کے قائدین کو اپنی صلاحیتیں منوانے کا موقع ملے گا ۔ انہوں نے تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کی دوبارہ تنظیم جدید کرنے کا کانگریس ہائی کمان سے مطالبہ کیا ۔۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT