Tuesday , October 24 2017
Home / شہر کی خبریں / کے سی آر توہم پرستی کا شکار

کے سی آر توہم پرستی کا شکار

سرکاری قیام گاہ میں دیوی کی مورتی نصب اور پوجا
حیدرآباد۔/20اکٹوبر، ( سیاست نیوز) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ توہم پرستی کے قائل ہیں اور اس کا ثبوت انہوں نے ایک سے زائد مرتبہ دیا ہے۔ حکومت کے استحکام اور ریاست کی ترقی کیلئے وہ دیوی دیوتاؤں کی مدد حاصل کرنے کیلئے بڑے پیمانے پر پوجا پاٹ اور دیگر رسومات کا اہتمام کرتے ہیں۔ چیف منسٹر کا کوئی بھی قدم پجاریوں کے مشوروں اور واستو کے برخلاف نہیں ہوتا۔ بتایا جاتا ہے کہ چیف منسٹر کو ان کے مذہبی مشیروں نے سرکاری قیامگاہ میں ایک نئی دیوی کی مورتی نصب کرنے کی ہدایت دی جس پر عمل کرتے ہوئے چیف منسٹر نے آج سرکاری قیامگاہ کے احاطہ میں بڑے پیمانے پر پوجا پاٹ کا اہتمام کرتے ہوئے ’’ پوچماں تلی‘‘ دیوی کی مورتی کو نصب کیا۔ چیف منسٹر کی شریک حیات شوبھا، رکن پارلیمنٹ کویتا، کے ٹی آر کے افراد خاندان اور دیگر افراد نے اس پوجا پاٹ میں حصہ لیا۔ دیوی کی مورتی کی نصب کئے جانے کے موقع پر خصوصی ویدک پنڈتوں کو مدعو کیا گیا تھا۔ بتایا جاتا ہے کہ موجودہ سرکاری رہائش گاہ میں اس دیوی کی مورتی نصب کرنے کی صورت میں حکومت کے استحکام اور ریاست کی خوشحالی کی پیش قیاسی کی گئی تھی۔ چیف منسٹر کسی بھی کام کے آغاز کے سلسلہ میں بڑے پیمانے پر پوجا پاٹ پر یقین رکھتے ہیں۔ ایک دن قبل چہارشنبہ کو چیف منسٹر نے یادادری مندر کے درشن کئے تھے اور وہاں خصوصی پوجا کی تھی۔ اس مندر کے نام پر باقاعدہ نیا ضلع قائم کیا گیا ہے۔ گزشتہ ہفتہ چیف منسٹر نے ورنگل کی بھدراکالی مندر کو 3کروڑ 50لاکھ روپئے مالیتی سونے کا کلس بھینٹ کیا تھا۔ چیف منسٹر کی مذہبی رسومات میں زائد دلچسپی پر ان کے قریبی رفقاء کا ماننا ہے کہ ریاست کی بھلائی کیلئے چیف منسٹر دیوی دیوتاؤں سے مدد حاصل کررہے ہیں۔ واضح رہے کہ موجودہ سرکاری رہائش گاہ کے قریب ہی نیا کیمپ آفس تعمیر کرنے کا منصوبہ تیار کیا گیا ہے اور توقع ہے کہ نومبر میں تعمیری کاموں کا آغاز ہوجائیگا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT