Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / کے سی آر سے کانگریس کے چار قائدین کی خفیہ ملاقات

کے سی آر سے کانگریس کے چار قائدین کی خفیہ ملاقات

ٹی آر ایس میں شمولیت کے خواہاں ، وفاداری کی تبدیلی سے کانگریس کے حوصلے پست
حیدرآباد ۔ 10 ۔ جون : ( سیاست نیوز ) : کانگریس کے چار قائدین نے خفیہ طور پر چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر سے ملاقات کرتے ہوئے ٹی آر ایس میں شمولیت کے لیے بات چیت کی ہے ۔ کانگریس کے رکن پارلیمنٹ مسٹر جی سکھیندر ریڈی کسی بھی وقف حکمران ٹی آر ایس میں شامل ہوسکتے ہیں ۔ کانگریس پارٹی تلنگانہ میں برے دور سے گذر رہی ہے ۔ پارٹی قائدین کے آپسی اختلافات اور سیاسی وفاداریاں تبدیل کرنے سے پارٹی کیڈر کے حوصلے پست ہورہے ہیں ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ کانگریس کے 4 سینئیر قائدین رکن پارلیمنٹ مسٹر جی سکھیندر ریڈی ، سابق رکن پارلیمنٹ مسٹر جی ویویک سابق ریاستی وزیر مسٹر جی ونود اور سابق اسپیکر مسٹر کے آر سریش ریڈی چیف منسٹر سے ملاقات کرنے والوں میں شامل ہیں ۔ قبل ازیں کومٹ ریڈی برادرس کی ٹی آر ایس میں شامل ہونے کی افواہ تھی ۔ کومٹ ریڈی وینکٹ ریڈی نے صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کیپٹن اتم کمار ریڈی کے علاوہ دوسرے قائدین پر برسر عام تنقید کرتے ہوئے شکوک کو تقویت پہونچا دی تھی جس پر پارٹی نے انہیں وجہ نمائی نوٹس بھی جاری کی تھی ۔ بعد ازاں دونوں بھائیوں نے ٹی آر ایس میں جانے کی تردید کی تھی ۔ تاہم ضلع کریم نگر کی نمائندگی کرنے والے کانگریس کے دونوں بھائیوں اور نظام آباد سے تعلق رکھنے والے سابق اسپیکر کے آر سریش ریڈی نے خفیہ طور پر کے سی آر سے ملاقات کرنے اطلاعات عام ہوتے ہی کانگریس حلقوں میں ہلچل شروع ہوگئی ہے ۔ کانگریس پارٹی کے سینئیر قائدین ان سے رابطہ پیدا کرتے ہوئے پارٹی نہ چھوڑنے کا مشورہ دے رہے ہیں ۔ کانگریس کے سینئیر قائد آنجہانی وینکٹ سوامی کے دونوں فرزند علحدہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل سے قبل ٹی آر ایس میں شمولیت اختیار کرچکے تھے ۔ کانگریس کی جانب سے علحدہ تلنگانہ ریاست تشکیل دینے کے بعد دونوں بھائی ٹی آر ایس سے مستعفی ہو کر دوبارہ کانگریس میں شامل ہوئے تھے اور 2014 کے عام انتخابات میں دونوں بھائیوں کو ٹی آر ایس نے شکست دی تھی ۔ ورنگل لوک سبھا کے ضمنی انتخاب کے لیے کانگریس اور ٹی آر ایس دونوں نے مسٹر جی ویویک کو امیدوار بنانے کا پیشکش کیا تھا ۔ تاہم ویویک نے مقابلہ کرنے سے انکار کردیا تھا ۔ حالیہ تشکیل دی گئی تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی میں مسٹر جی ویویک کو نائب صدر بنانے کے علاوہ کانگریس کی فیصلہ ساز باڈی سی ڈبلیو سی میں بھی شامل کیا گیا تھا اور ان کے بھائی مسٹر جی ونود کو ارکان عاملہ میں شامل کیا گیا تھا ۔ ڈی سرینواس کی ٹی آر ایس میں شمولیت کے بعد سابق اسپیکر مسٹر کے آر سریش ریڈی کو کانگریس پارٹی میں اچھی خاصی اہمیت مل رہی تھی ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ کانگریس کے قائدین اپنے سیاسی مستقبل کو لے کر فکر مند ہے اس لیے ٹی آر ایس کے دروازے پر دستک دے رہے ہیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT