Tuesday , August 22 2017
Home / شہر کی خبریں / کے سی آر کے خلاف امیت شاہ کے ریمارکس پر ہریش راؤ کی سخت برہمی

کے سی آر کے خلاف امیت شاہ کے ریمارکس پر ہریش راؤ کی سخت برہمی

مرکز پر تلنگانہ کے خلاف متعصب رویہ اختیار کرنے کا الزام ، اہم مسائل کی یکسوئی کا مطالبہ
حیدرآباد۔ 18 ستمبر (این ایس ایس) تلنگانہ کے وزیر آبپاشی ٹی ہریش راؤ نے 17 ستمبر کو ’’تلنگانہ یوم نجات‘‘ نہ منانے کے ضمن میں چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کے خلاف بی جے پی کے صدر امیت شاہ کی طرف سے کئے گئے ریمارکس کی سخت مذمت کی۔ ہریش راؤ نے آج یہاں اخباری نمائندو سے بات چیت کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ ریاست کی تقسیم کے بعد مرکزی حکومت، آندھرا پردیش کو ممکنہ مدد پہونچا رہی ہے، اس کے برخلاف تلنگانہ کے تئیں جانبداری اور تعصب کا مظاہرہ کیا جارہا ہے۔ ہریش راؤ نے کہا کہ مرکزی حکومت، ہائیکورٹ کی تقسیم ، کالیشورم کے قومی موقف دیگر آبپاشی پراجیکٹوں کے علاوہ تلنگانہ کو خصوصی پیاکیج دینے کے مسئلہ پر پس و پیش کررہی ہے۔ ہریش راؤ نے کہا کہ ’’امیت شاہ کو تلنگانہ کے عوام کو یہ جواب دینا ہوگا کہ آیا مرکز کی بی جے پی حکومت آخر کس لئے ہائیکورٹ کی تقسیم اور کالیشورم کو قومی موقف دینے جیسے اہم مسائل کو حل کرنے کے قابل نہیں رہی ہے‘‘۔ وزیرآبپاشی نے کہا کہ آندھرا پردیش کو دیئے گئے مالی پیاکیج کے خطوط پر تلنگانہ کو بھی خصوصی مالی پیاکیج دیا جانا چاہئے اور اس مسئلہ پر بالخصوص امیت شاہ کو اپنے ردعمل کا اظہار کرنا چاہئے۔ انہوں نے تلنگانہ میں بی جے پی کے برسراقتدار آنے سے متعلق امیت شاہ کے ریمارک کو مضحکہ خیز قرار دیا اور ریاستی بی جے پی قیادت کو مشورہ دیا کہ تلنگانہ کے مسائل کی یکسوئی کو یقینی بنانے کے لئے مرکز پر دباؤ ڈالنا چاہئے۔

TOPPOPULARRECENT