Wednesday , July 26 2017
Home / شہر کی خبریں / کے سی آر 20 سال تک چیف منسٹر رہیں گے ‘ ہریش راؤ

کے سی آر 20 سال تک چیف منسٹر رہیں گے ‘ ہریش راؤ

ٹی آر ایس ہی سنہرے تلنگانہ کا خواب پورا کرسکتی ہے ۔ ریاستی وزیر آبپاشی کا خطاب
حیدرآباد 9 ؍ اپریل ( سیاست نیوز) وزیر آبپاشی ٹی ہریش راؤ نے چندرشیکھرراؤ حکومت کی کارکردگی پر اپنی مسرت کا اظہار کیا اور کہا کہ اس کارکردگی کی روشنی میں چندر شیکھرراؤ صرف ایک معیاد کیلئے نہیں بلکہ چار معیادوں (بیس سال ) تک چیف منسٹر برقرار رہیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ پہلی معیاد مکمل ہونے کے باوجود آئندہ (20) سال تک کے چندر شیکھرراؤ ہی تلنگانہ کے چیف منسٹر رہیں گے ۔ ہریش راؤ نے کہا کہ تلنگانہ راشٹرا سمیتی نے ورنگل میں گذشتہ عرصہ کے دوران منعقدہ جلسوں میں تاریخ ساز کامیابی حاصل کی تھی ۔ لہذا اب 27 اپریل کو ورنگل میں منعقد ہونے والے جلسہ کے ذریعہ تاریخ دہرائی جائیگی ۔ انہوں نے پارٹی قائدین و کارکنوں سے 27 اپریل کے جلسہ کو کامیاب بنانے کی اپیل کی ۔ ڈپٹی چیف منسٹر مسٹر کے سری ہری وزیر سیاحت مسٹر چندولعل انچارج انتظامات جلسہ عام ‘ بی سدرشن ریڈی ‘ اور ضلع پارٹی قائدین ٹی آر ایس کے ہمراہ ہنمکنڈہ میں واقع پرکاش ریڈی پیٹ میں جلسہ عام کے مقام کا مسٹر ہریش راؤ نے تفصیلی معائنہ کیا ۔ اور بعدازاں متحدہ ضلع ورنگل کے تلنگانہ راشٹریہ سمیتی کے قائدین و کارکنوں کے توسعی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ چیف منسٹر چندرشیکھرراؤ کی قیادت میں ہی سنہرا تلنگانہ حاصل کیا جانا چاہئے ۔ انہوں نے کہاکہ تلنگانہ راشٹرا سمیتی کی زیر قیادت تین سالہ تلنگانہ حکومت نے ہمہ جہتی ریاستی ترقی عوام کی فلاح و بہبود کیلئے کئی اقدامات کئے گئے ۔ ریاست کی ترقی اور کسانوں کو زرعی اغراض کیلئے اقدامات کی کانگریس قائدین مخالفت کر رہے ہیں ۔ وزیر آبپاشی نے کانگریس قائدین کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ وہ محض اس خوف سے مخالفت کر رہے ہیں کہ ٹی آر ایس دور میں آبپاشی پراجکٹس کی تکمیل پر کانگریس کا ریاست میں وجود باقی نہیں رہیگا ۔ انہوں نے تلگودیشم قائدین پر تنقید کی اور کہاکہ تلنگانہ میں تلگودیشم کا وجود نہیں رہیگا ۔ انہوں نے پیش قیاسی کی کہ بی جے پی کو گذشتہ انتخابات میں شہر حیدرآباد سے پانچ نشستوں پر کامیابی ملی تھی لیکن 2019  کے انتخابات میں اسے پانچ نشستوں پر بھی کامیابی حاصل نہیں ہوگی ۔ ہریش راؤ نے کہا کہ 50 لاکھ رکنیت سازی کرنے کا نشانہ مقرر کر کے تیزی کے ساتھ رکنیت سازی جاری ہے ۔ عوام کا مثبت ردعمل مل رہا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ 27 اپریل کے جلسہ عام میں توقع ہے کہ کہیں زیادہ عوام کی شرکت متوقع ہے ۔ ڈپٹی چیف منسٹر کے سری ہری نے کہا کہ ورنگل وردھناپیٹ اور پرکال اسمبلی حلقوں سے ایک ایک لاکھ افراد شرکت کریں گے۔ جلسہ عام کو کامیاب بنانے اقدامات کئے جانے کا مسٹر چندولعل نے اظہار کیا ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT