Saturday , April 29 2017
Home / شہر کی خبریں / ک30 کروڑ روپئے پھینک دینے کی افواہ

ک30 کروڑ روپئے پھینک دینے کی افواہ

بینک سے زیادہ موسیٰ ندی بریج پر عوام کا ہجوم
حیدرآباد۔13نومبر(سیاست نیوز) موسی ندی میں 30کروڑ پھینک دیئے جانے کی اطلاع نے شہر یوں میں کھلبلی مچادی اور شہری عطاپور کے قریب موسی ندی پر تعمیر برج پر جمع ہونے لگے ۔ دن میں پھیلی اس اطلاع کا اثر رات دیر گئے تک دیکھا جاتا رہا اور لوگ اس اطلاع کی توثیق کیلئے عطاپور پہنچنے لگے۔ دن میں 11بجے جب اطلاع پھیلنی شروع ہوئی تو لوگ جوق در جوق اس بات کی تصدیق کیلئے پہنچتے نظر آئے لیکن انہیں مایوسی کا سامنا کرنا پڑا۔ بتایا جاتا ہے کہ صبح علاقہ میں پولیس کی گاڑیوں کی گشت کے سبب یہ اطلاع پھیل گئی کہ کسی نے موسی ندی میں 30کروڑ کالا دھن پھینک دیا ہے اس اطلاع کے بعدشہر کے اس حصہ کی صورتحال بتدریج تبدیل ہو گئی اور پولیس کو اس علاقہ میں ٹریفک کنٹرول کرنے میں دشواریوں کا سامنا کرنا پڑ رہا تھا۔اطراف کے مکینوں نے بتایا کہ صبح سے ہی لوگ اس اطلاع کے ساتھ ندی میں مشاہدہ کیلئے پہنچنے لگے تھے اور یہ سلسلہ رات دیر گئے تک جاری رہا۔ اس افواہ کے متعلق کہا جا رہا ہے کہ اس طرح کی افواہوں کے ذریعہ بد امنی پھیلانے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ شہر میں آج اتوار کے باوجود مصروف ترین دن رہا اور موسی ندی میں 30کروڑ کی افواہ نے شہریوں کو بینک کی قطار میں ٹھہرنے سے زیادہ موسی ندی کی جانب متوجہ کیا اور یہ بھی کہا جا رہا ہے کہ پولیس کو مصروف رکھنے کی کوشش کے طور پر اس طرح کی افواہیں گشت کروائی جا رہی ہیں تاکہ غیر قانونی کرنسی کی تبدیلی کی سمت کوئی متوجہ نہ ہونے پائے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT