Wednesday , June 28 2017
Home / شہر کی خبریں / گاؤ رکھشا کے نام پر حملے تشویشناک ‘ سی پی آئی

گاؤ رکھشا کے نام پر حملے تشویشناک ‘ سی پی آئی

وزیر اعظم کی خاموشی افسوسناک ۔ سدھاکر ریڈی کی صحافت سے ملاقات
حیدرآباد۔ 9 اپریل (سیاست نیوز) جنرل سیکریٹری سی پی آئی ایس دھاکر ریڈی نے الزام عائد کیا کہ بی جے پی حکومت میں راج بھونس سیاسی مراکز میں تبدیل کردیئے گئے ہیں اور ملک میں سیاست کو تاراج کیا جارہا ہے۔ آج وجئے واڑہ میں ’میٹ دی پریس‘ میں حصہ سدھاکر ریڈی نے ملک میں گاؤ رکھشا کے نام پر حملوں اور اموات پر تشویش کا اظہار کیا اور کہا کہ گاؤ سمرکشا حملوں کے واقعات کیلئے آر ایس ایس بالواسطہ مدد کررہی ہے۔ علاوہ ازیں وزیراعظم نریندر مودی ان واقعات پر خاموش ہیں۔ انہوں نے کہا کہ گاؤ رکشا کے نام پر مظالم اور مارپیٹ میں بے گناہ افراد کی اموات پر وزیر اعظم کی خاموشی افسوسناک ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت کی پالیسیاں کارپوریٹ اداروں کی ہمت افزائی کرنے اور انہیں بچانے کیلئے مرتب ہیں ۔ ان پالیسیوں کے ذریعہ مرکزی حکومت کارپوریٹ اداروں کو بڑھاوا دے رہی ہے۔ سدھاکر ریڈی نے چیف منسٹر آندھرا پردیش چندرا بابو نائیڈو کو ہدف ملامت بنایا اور کہا کہ تلنگانہ میں تلگودیشم ارکان اسمبلی کے انحراف کو نائیڈو نے جسم فروشی سے تعبیر کیا تھا، لیکن جب کسی اور پارٹی کے ارکان اسمبلی تلگو دیشم  میں شامل ہوں تو یہ کہا جارہا ہے کہ آندھرا پردیش کی ترقی سے متاثر ہوکر پارٹی میں شمولیت اختیار کر رہے ہیں۔ یہ دوہرا معیار ہے ۔ سدھاکر ریڈی نے چندرا بابو نائیڈو کو موقع پرست سیاست دان قرار دیا ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT