Friday , October 20 2017
Home / ہندوستان / گائے ماتا دودھ دیتی ہے ، ووٹ نہیں: لالوپرساد یادو کا طنزیہ ریمارک

گائے ماتا دودھ دیتی ہے ، ووٹ نہیں: لالوپرساد یادو کا طنزیہ ریمارک

پٹنہ، 5 اگست (سیاست ڈاٹ کام) بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی زیر اقتدار ریاست راجستھان کی سب سے بڑی گئوشالہ میں گایوں کی بدحال صورتحال پر راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) کے سپریمو لالو پرساد یادو نے راشٹریہ سویم سیوک سنگھ (آر ایس ایس) اور بی جے پی پر شدید حملہ کرتے ہوئے کہا کہ خودساختہ قوم پرستوں نے ’’گئوماتا‘‘ کا جو حال کیا ہے وہی حال یہ ’’گنگا میا‘‘کا بھی کریں گے۔ مسٹر لالو یادو نے ٹوئٹر پر آج لکھا کہ ’’گئوماتا دودھ دیتی ہے ، ووٹ نہیں۔ پر ان کو لگتا ہے کہ گئوماتا ووٹ دیتی ہے۔ انہوں نے تو گائے کبھی پرورش ہی نہیں کی ، تو معلومات کیسے ہو؟‘‘ ایک دوسرے ٹویٹ میں راشٹریہ جنتا دل کے سربراہ نے کہاکہ ’’جو حال ان نام نہاد قوم پرستوں نے  ’گئو-ماتا ‘کا کیا ہے وہی ’گنگا میا ‘کا کریں گے ۔کھاں ہے آر ایس ایس؟‘‘دریں اثناء، بہار کے نائب وزیر اعلی اور مسٹر یادو کے بیٹے تیجسوی یادو نے اس معاملے میں بی جے پی پر نشانہ لگاتے ہوئے کہا کہ ’’بی جے پی گائے کے نام پر وزارت، وزیر اور بجٹ بناتی ہے ، چندہ اکٹھا کرواتی ہے اور آخر میں سب کو ڈ کار جاتی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT